The news is by your side.

Advertisement

خواتین کو ہراساں کرنے کے واقعات روکنا صرف حکومت کا کام نہیں، صدر مملکت

لاہور: صدرِ مملکت ڈاکٹرعارف علوی نے کہاہے کہ خواتین کو ہراساں کرنے کے واقعات کو روکنا صرف حکومت کاکام نہیں ہے۔

اسلام آباد میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صدر عارف علوی کا کہنا تھا کہ ’ہر جگہ پولیس والا نہیں ہوتا، معاشرے پر بھی کچھ ذمہ داریاں عائد ہوتی ہیں، خواتین کو ہراساں کرنے کے واقعات کو روکنا یا ختم کرنے کے لیے سب کو اٹھنا ہوگا‘۔

انہوں نے کہا کہ مینار پاکستان واقعے میں لوگ ویڈیوز بناتے رہے، کسی نے لڑکوں کو ہاتھ سے نہیں روکا،  خواتین کو ہراساں کرنے کے واقعات بسوں اور راستوں پر بھی ہوتے ہیں، ایسے واقعات کی روک تھام کے لیے معاشرے کو بھی کھڑا ہوناچاہیے۔

انہوں نے کہا کہ ’مغرب انسانی حقوق کی صرف باتیں ہی کرتا ہے بہت سارے امور پر عمل نہیں کرتا، عورت کو حقوق اسلام نے ہی دیے ہیں، جن میں وراثت کا حصہ اور دیگر حقوق شامل ہیں،  اسلام نے ابتدا ہی سے وحدانیت کے ساتھ معاشرے میں امتیازی قوانین کا خاتمہ کیا‘۔

انہوں نے کہا کہ ’معاشرے میں عور ت کو کمزور سمجھا جاتا ہے،قوانین کے ساتھ ہمیں معاشرے کو ٹھیک کرنے کیلئے محنت کرنا پڑے گی،خواتین کو اگر وراثت نہ ملے تو یہ بہت بڑا مسئلہ ہے‘۔

Comments

یہ بھی پڑھیں