The news is by your side.

اے آر وائی نیوزکی بندش : صحافی تنظیمیں آج ملک بھر میں یومِ سیاہ منارہی ہیں

کراچی : اے آروائی نیوز کی بندش کے خلاف صحافی تنظیمیں آج ملک بھرمیں یوم سیاہ منارہی ہیں، صدرپی ایف یوجے نے کہا کہ مظاہرے اور پریس کلبوں پر سیاہ پرچم لہرائے جائیں گے۔

تفصیلات کے مطابق اےآروائی نیوز کی بندش اور صحافیوں کامعاشی قتل روکنے کے لیے صحافی تنظیمیں آج ملک بھرمیں یوم سیاہ منارہی ہیں۔

صدر پی ایف یوجے افضل بٹ نے کہا ہے کہ آج ملک بھرمیں یوم سیاہ منایا جائے گا ، شہر شہر احتجاج ہوگا اور پریس کلبوں پرسیاہ پرچم لہرائے جائیں گے۔

افضل بٹ کا کہنا تھا کہ اے آر وائی نیوز کو بحال نہ کیا گیا تو کراچی سے اگست کے آخر میں ورکرز یکجہتی مارچ کا آغاز ہوگا۔

انھوں نے کہا کہ یکجہتی مارچ سندھ بلوچستان سےہوتا ہوا پنجاب میں داخل ہو گا، جس کے بعد مارچ اسلام آباد میں پیمرا دفتر کے سامنے دھرنے میں تبدیل کردیا جائے گا۔

دوسری جانب آرآئی یوجے کی جانب سے راولپنڈی پریس کلب پرآج شام چار بجے سیاہ پرچم لہرایا جائے گا۔

گذشتہ روز اے آر وائی نیوز کے پروگرام دی رپورٹرز میں صدر پی ایف یوجے افضل بٹ نے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ اے آر وائی نیوز کی بندش سےمعاشی قتل کی تلوارلٹک رہی ہے، آپ کوبتاناچاہتاہوں کہ اےآروائی نیوزاس وقت اکیلا نہیں ہے پورا پاکستان اور ایک ایک میڈیا ورکر اے آر وائی نیوز کے ساتھ کھڑا ہے۔

افضل بٹ کا کہنا تھا کہ یہ احتجاجی تحریک کی ابتداہے، اےآروائی نیوزکی بندش پرمٹھائی بانٹےوالوں کومتنبہ کرنا چاہتا ہوں، سیٹھ لوگ چاہتے ہیں کہ اے آر وائی کا بزنس ہمیں مل جائے۔

صدر پی ایف یوجے نے مزید کہا کہ جب 4ہزارلوگ فٹ پاتھ پرآئیں گےتوپوری انڈسٹری شیک ہوکررہ جائے گی ، حکومت اور اداروں سے کہتے ہیں آپ نے قانون کے مطابق نوٹس دیا، جب آپ نے نوٹس دیا تو چینل کو سنیں ، آپ نے چینل کو بند پہلے کر دیا، تفتیش بعد میں کررہےہیں۔

انھوں نے تمام اسٹیک ہولڈر سے گزارش کی ملک ایسے حالات کا متحمل نہیں ، اگر ہم آواز بلند کریں گے تو اگلے مرحلے میں پاکستان کو سنبھالنا مشکل ہو جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں