The news is by your side.

Advertisement

راولپنڈی : سابق صدر آصف زرداری کو کل پمز اسپتال منتقل کيا جائے گا

راولپنڈی : پاکستان پیپلز پارٹی نے سابق صدر آصف زرداری کو کل پمز اسپتال منتقل کيا جائے گا، ميڈيکل بورڈ کی سفارش پر جیل انتطامیہ نے اسپتال منتقل کئے جانے کے انتظامات مکمل کرلیے۔

تفصیلات کے مطابق پیپلز پارٹی کے رہنماؤں بلاول بھٹو زرداری، شیری رحمان اور دیگر کی جانب سے مطالبہ کیا گیا تھا کہ سابق صدر آصف زرداری کو طبیعت کی ناسازی کے باعث اسپتال منتقل کیا جائے۔

اس سلسلے میں ذرائع کا کہنا ہے کہ آصف زرداری کو سخت سیکیورٹی میں کل بروز جمعرات پمز اسپتال منتقل کيا جائے گا، سابق صدر کو ميڈيکل بورڈ کی سفارش پر پمز منتقل کيا جا رہا ہے۔

ذرائع کے مطابق ميڈيکل بورڈ کی سفارشات گزشتہ ہفتے وزارت داخلہ کو بھجوائی گئی تھیں، دوسری جانب جیل انتظامیہ کی جانب سے آصف زرداری کو پمز اسپتال منتقل کئے جانے کے انتظامات مکمل کر لیے ہیں۔

یاد رہے کہ پاکستان پیپلز پارٹی کی رینما شیری رحمان نے سابق صدر آصف زرداری کو اسپتال منتقل کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا تھا کہ ڈاکٹرز نے آصف زرداری کو اسپتال منتقل کرنے کی تجویز دی ہے لیکن انہیں تجویز کے بعد بھی جیل میں رکھا جا رہا ہے۔

شیری رحمان کا کہنا تھا کہ آصف زرداری کی صحت کے ساتھ کھیلا جا رہا ہے، حکومت انتقام کی ضد پر اڑی ہے، حکومت پی پی کو جھکا نہیں سکتی، پی پی رہنما نے مزید کہا کہ آصف زرداری کو جیل میں علاج کی کوئی سہولت میسر نہیں ہے۔

دوسری جانب بلاول بھٹو زرداری نے ٹویٹر پیغام میں کہا ہے کہ بغیر کسی جرم میں قید میرے والد کو ڈاکٹرز نے اسپتال منتقل کرنے کی ایڈوائس دی ہے لیکن حکومت ڈاکٹرز کی اسپتال منتقل کرنے کی ہدایات کو نہیں مان رہی۔

پی پی چیئرمین کا کہنا تھا کہ سرکاری ڈاکٹرز کی ہدایات نہ ماننے پر عدالت جا رہے ہیں، آصف زرداری کو کچھ ہوا تو ذمہ دار حکومت ہوگی۔

مزید پڑھیں : پیپلز پارٹی کا آصف زرداری کو اسپتال منتقل کرنے کا مطالبہ

واضح رہے کہ آصف زرداری جعلی بینک اکاؤنٹس کیس میں جیل بھیجا گیا ہے، دس دن قبل احتساب عدالت نے جعلی بینک اکاؤنٹس کیس میں آصف زرداری اور فریال تالپور کے جوڈیشل ریمانڈ میں 5 ستمبر تک توسیع کی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں