The news is by your side.

گاڑیوں کی قیمتوں میں بےتحاشہ اضافہ کیوں؟

کسی بھی پاکستانی کی گاڑی خریدتے ہوئے سب سے بڑی کوشش یہ ہوتی ہےکہ ایسی گاڑی خریدی جائے جو اس کے بجٹ میں آسانی سے دستیاب ہو، پاکستانی صارفین یہ سوچ کر ہی پریشان ہیں کہ نئی گاڑی کیسے خریدیں؟

پاکستان میں مقامی سطح پر گاڑیاں اسمبل کرنے والی کمپنیوں کی جانب سے قیمتوں میں اضافے اور سپلائی میں تاخیر اور ڈالر کی بڑھتی ہوئی قدر کی وجہ سے مقامی مارکیٹ میں گاڑیوں کی قیمتیں سو فیصد بڑھ چکی ہیں۔

اس حوالے سے اے آر وائی نیوز کے پروگرام باخبر سویرا میں ماہر آٹو انڈسٹری سنیل سرفراز منج نے خصوصی گفتگو کی اور اس اہم مسئلے پر روشنی ڈالی۔

ان کا کہنا تھا کہ حالیہ دنوں میں ڈالر کی قدر میں اضافے اور اسمبلنگ میں استعمال ہونے والے پرزہ جات کی درآمد پر پابندی کو جواز بناتے ہوئے گاڑیاں اسمبل کرنے والی کمپنیوں نے گاڑیوں کی قیمتوں میں اضافہ کیا۔

انہوں نے کہا کہ گاڑیوں میں استعمال ہونے والا سارا سامان بیرون ملک سے درآمد کیا جاتا ہے جس کی قیمت ڈالر میں ادا کرنا ہوتی ہے، جس کا اثر قیمتوں پر پڑنا لازمی امر ہے۔

سنیل سرفراز منج نے کہا کہ سب سے اہم بات یہ ہے کہ پاکستان آٹو موبائل انڈسٹری لوکل سطح پر کام کیوں نہیں کررہی؟ اس کی اہم وجہ یہ ہے کہ ہمارے یہاں پالیسیز زیادہ دیر تک مستحکم نہیں رہتیں ان میں ردو بدل ہوتا رہتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اگر حکومت آٹو انڈسٹری کو ریلیف فراہم کرے اور سہولیات فراہم کرے تو یہ انڈسٹری مزید مشکلات کی طرف جانے سے بچ سکتی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں