The news is by your side.

Advertisement

اسٹاک ایکسچینج پر حملہ، مرکزی دروازے پر کیا ہوا؟ اہلکار نے آنکھوں دیکھا حال بتادیا

کراچی: شہر قائد میں پاکستان اسٹاک ایکسچینج کے مرکزی دروازے پر رونما ہونے والا آنکھوں دیکھا حال پولیس اہلکار نے بیان کردیا۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق کراچی کے علاقے ٹاور میں موجود پاکستان اسٹاک ایکسینج کی عمارت میں حملہ قانون نافذ کرنے والے اداروں نے ناکام بنادیا جس کے نتیجے میں چاروں حملہ آور مارے گئے جبکہ 2 اہلکاروں سمیت 7 افراد شہید ہوئے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ دہشت گردوں سے مقابلہ کرنے والے پولیس اہلکار نے آنکھوں دیکھا حال بیان کردیا۔

محمد رفیع نے بتایا کہ دہشت گردوں نے پہلے سب انسپکٹر کو گولی ماری، ایک دہشت گرد کو اُس نے سر پر گولی مار کر ہلاک کیا، عمارت میں گھسنے کی کوشش کرنے کے لیے ایک دہشت گرد گرنیڈ پھینک رہا تھا اور دوسرا فائرنگ کررہا تھا۔

مزید پڑھیں: پاکستان اسٹاک ایکسچینج پر دہشت گردوں کا حملہ ناکام ، چاروں حملہ آور ہلاک

واضح رہے کہ چند گھنٹوں قبل پاکستان اسٹاک ایکسچینج پر دہشتگردوں نے حملہ کیا تھا جس کے نتیجے میں ایک پولیس اہلکار اور اسٹاک ایکسچینج کے 2 سیکیورٹی گارڈ سمیت 7 افراد شہید ہوگئے جب کہ فورسز کی جوابی کارروائی میں چاروں دہشتگرد مارے گئے تھے۔

پولیس کے مطابق پولیس اور رینجرز اہلکاروں نے اسٹاک ایکسچینج میں داخلے کی کوشش کرتے وقت 2 دہشتگردوں کو ہلاک کیا جب کہ مزید 2 دہشتگردوں کو آگے ہی مار گرایا اور دہشتگرد اسٹاک ایکسچینج کی عمارت میں داخل نہ ہوسکے۔

پولیس ترجمان کا بتانا تھا کہ دہشتگردوں کے حملے میں ایک پولیس سب انسپکٹر اور اسٹاک ایکسچینج کے 2 سیکیورٹی گارڈ بھی شہید ہوگئے، اس کے علاوہ پولیس اہلکار سمیت 7 افراد زخمی بھی ہوئے ہیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں