The news is by your side.

Advertisement

ایازموتی والا کیخلاف بھتہ خوری کا ایک اور مقدمہ درج

کراچی : رینجرز کے ہاتھوں گرفتارہونے والے مبینہ فراڈیے اور بھتہ خور ایاز موتی والا کے گرد گھیرا مزید تنگ ہوگیا۔

اس حوالے سے ذرائع کا کہنا ہے کہ مبینہ بلیک میلر کے خلاف پریڈی تھانے میں ایک اور مقدمہ درج کرلیا گیا ہے، مقدمہ بھتہ خوری اور دہشت گردی دفعات کے تحت درج کیا گیا۔

پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ ایاز موتی والا کے خلاف تیسرا مقدمہ بلڈر ایوب کی مدعیت میں درج ہوا، مدعی کے مطابق وہ کھارادر میں تعمیراتی کام کروارہا تھا۔

مدعی کا کہنا ہے کہ28جنوری کی رات12بجے ایاز موتی والا اپنے مسلح ساتھیوں سمیت میرے پاس آیا اور ویڈیو بنا کر گالم گلوچ اور سنگین نتائج کی دھمکیاں دینا شروع کردیں۔

بلڈر ایوب نے بتایا کہ ایازموتی والا نے مجھے رواں سال ماہ فروری میں بوہری بازار میں واقع دوہا جیولرز پر بلایا، ملزم ایازموتی والا نےآتے ہی گالیاں دیں اور پیسے مانگنے لگا۔

مدعی کے مطابق ایاز موتی والا آئی جی سندھ اور سیکیورٹی ادارے کے اعلیٰ افسر کا حوالہ دینے لگا، اسی دوران سلیمان اورعلی میمن نے پستول نکال کر مجھ پرتان لی۔

بلڈر ایوب نے بتایا کہ اس نے ہمیں تین گھنٹے تک اسلحے کے زور پر یرغمال بنا کر رکھا، ایک کروڑ روپے دینے کے وعدے پر چھوڑا اور اگلے روز70لاکھ روپے لیے۔؎

مدعی کے بیان میں کہا گیا ہے کہ ملزم سلیمان بقایا30لاکھ کے لیے روزانہ فون کرتا رہا، مدعی نے اپیل کی ہے کہ ملزمان کے خلاف سخت قانونی چارہ جوئی کی جائے۔

یاد رہے کہ چند روز قبل حساس ادارے نے کراچی میں مبینہ طور پر بلڈروں کو بلیک میل کرنے والے سونے کے تاجر ایاز میمن موتی والا کو ساتھی سلیمان سمیت گرفتار کیا تھا،

حساس ادارے نے ایاز میمن موتی والا کو اس کے گھر سے گرفتار کیا جبکہ مزید ساتھیوں کی گرفتاری کے لئے چھاپے مارے جارہے ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ایاز موتی والا نے کراچی کے بلڈروں سے انہیں بلیک میل کرکے 40 سے زائد بلڈروں سے بھاری مالیت میں بھتہ وصول کیا بھتے کی رقم تقریباً بائیس 22کروڑ، 44چوالیس لاکھ روپے بنتی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں