The news is by your side.

Advertisement

بہاولپور میں پیش آیا انسانیت سوز واقعہ، خاتون انتقام کے لیے ہر حد سے گزر گئی

ملتان: پنجاب کے ضلع بہاولپور میں پیش آنے والے اجتماعی زیادتی کیس میں تحقیقات کے دوران سنسنی خیز انکشافات سامنے آئے ہیں۔

ایس ایس پی انویسٹی گیشن نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ بہاولپور کی تحصیل حاصل پور میں گزشتہ ہفتے 6 افراد نے والدین اور بھائیوں کے سامنے لڑکی کے ساتھ اجتماعی زیادتی کی۔

انہوں نے بتایا کہ واقعے میں ایک خاتون بھی ملوث ہے جس نے اپنا انتقام پورا کرنے کے لیے لڑکی کی 6 لڑکوں سے عصمت دری کروائی، ملزمہ کو گرفتار کرلیا گیا علاوہ ازیں دو اور ملزمان کو حراست میں لیا گیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ گرفتار ہونے والے ملزمان کی شناخت نجمہ، نصیر اور وسیم کے ناموں سے ہوئی۔ جن سے مزید تحقیقات کی جارہی ہیں۔پولیس افسر کے مطابق ملزمان نےلڑکی کے بھائی کو بھی بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنایا۔

مزید پڑھیں: بہاولپور میں زیادتی کا شکار لڑکی کی خودکشی، ملزم گرفتار

واضح رہے کہ چار روز قبل تحصیل حاصل پور میں 6 مسلح ملزمان نے اہل خانہ کے سامنے 14 سالہ لڑکی کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا اور بھائی کے جسم کا ایک حصہ کاٹ ڈالا تھا۔

واقعے کے بعد پولیس کی بھاری نفری جائے وقوعہ پر پہنچی اور زخمیوں کو اسپتال منتقل کیا۔ بعد ازاں بھائی کی مدعیت میں ایف آئی آر درج کی گئی جس میں مدعی نے مؤقف اختیار کیا کہ ملزمان نے گھر والوں کے سامنے بہن کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں