The news is by your side.

Advertisement

اسپیکر قومی اسمبلی نے ذاتی گارڈز پارلیمنٹ احاطے میں لانے پر پابندی لگا دی

اسلام آباد: پارلیمنٹ ہاؤس کے باہر کیمرا مین پر میاں نواز شریف کے گارڈز کے تشدد پر اسپیکر قومی اسمبلی نے فوری ایکشن لے لیا۔

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی کے اسپیکر اسد قیصر نے کوریج کے دوران کیمرا مین پر نواز شریف کے گارڈز کے تشدد کا فوری نوٹس لے لیا ہے۔

سیکورٹی گارڈز کے خلاف ایف آئی آر درج کرانے کا حکم

اسد قیصر نے تشدد میں ملوث نواز شریف کے سیکورٹی گارڈز کے خلاف ایف آئی آر درج کرانے کا حکم دے دیا ہے۔

اسپیکر قومی اسمبلی نے کہا کہ آئندہ کوئی شخصیت اپنے ساتھ گارڈز پارلیمنٹ کے احاطے میں نہیں لاسکے گی، کوئی کتنا بھی بڑا لیڈر ہو سیکورٹی پارلیمنٹ سے باہر چھوڑ کر آئے۔

اسپیکر قومی اسمبلی نے رولنگ دیتے ہوئے کہا کہ ارکان کی حفاظت پارلیمنٹ کی سیکورٹی کرے گی۔


یہ بھی پڑھیں:  نواز شریف کے گارڈ کے تشدد سے کیمرا مین بے ہوش: حکومت کی مذمت


واضح رہے کہ آج پارلیمنٹ ہاؤس کے باہر نواز شریف کے اسکواڈ نے 2 کیمرا مینوں پر بہیمانہ تشدد کیا، جس سے سما ٹی وی کا کیمرا مین بے ہوش ہو گیا۔ دوسرے کیمرہ مین کو بھی شدید زخمی حالت میں اسپتال منتقل کیا گیا۔

بے ہوش کیمرا مین کا اسپتال میں معائنہ جاری ہے، معائنے کے بعد میڈیکل رپورٹ جاری کی جائے گی۔ دوسری طرف صحافیوں نے نواز شریف کے ایک گارڈ کو پکڑ لیا، جب کہ ایک گاڑی میں بیٹھ کر فرار ہو گیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں