The news is by your side.

Advertisement

نوکری کا جھانسہ، لڑکی بھارتی درندے کی ہوس کا نشانہ بن گئی

بنگلور: نوکری کے جھانسے میں آکر مظلوم بنگلادیشی لڑکی بھارتی درندے کی ہوس کا نشانہ بن گئی۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق نوکری کو کہہ کر ایک خاتون، بنگلادیشی لڑکی کو بھارتی شہر بنگلور لائی جس کے بعد اسے ایک کمرے میں بند کردیا گیا اور پھر نامعلوم درندہ اس کے جسم کو نوچتا رہا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ لڑکی کو بنگلور لانے کے بعد اسے جسم فروش بننے کا کہا گیا۔ مظلوم لڑکی کا کہنا ہے کہ اسے بہتر روزگار کا کہا گیا تھا، زرا بھی عمل نہیں تھا کہ وہ مجھ سے جسم فروشی کے کاروبار کے لیے اکسائیں گے۔

بھارتی خواتین اپنے ہی ملک میں خطرے کا شکار، ہر 15 منٹ میں ایک خاتون سے زیادتی

لڑکی کو چار دن تک مسلسل ایک کمرے میں بند کرکے زیادتی کا نشانہ بنایا جاتا رہا۔ بعد ازاں لڑکی نے ہمت کی اور کمرے سے موقع دیکھ کر فرار ہوئی اور پولیس اسٹیشن آپہنچی جس کے بعد معاملہ کھل کر سامنے آگیا۔

پولیس حکام نے کہا ہے کہ ملزمان کی تلاش کے لیے چھاپے مارے جارہے ہیں، تاہم لڑکی کا تعلق بنگلادیش سے ہے تو وہ بنگلور شہر کے بارے میں نہیں جانتی، اسے یہ بھی نہیں پتا کہ اسے کس علاقے میں قید کرکے رکھا گیا تھا۔

خیال رہے کہ 23 جنوری کو بنگلور پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے انسانی اسمگلنگ میں ملوث دو بنگالیوں کو گرفتار کیا تھا جن کے پاس سے کئی بنگلادیشی خواتین بھی بازیاب ہوئی تھیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں