site
stats
پاکستان

ماضی میں‌ راؤ انوار کو ہٹانے پر ن لیگ اور پی ٹی آئی نے احتجاج کیا تھا، بلاول بھٹو

media talk
ہاؤس آف شریف میں لڑائی کا فائدہ سینیٹ الیکشن میں اٹھائیں گے

کراچی: پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئر مین بلاول بھٹو نے کہا ہے کہ انکاؤنٹرز کی پالیسی ملک کے لیے مفید نہیں، ملک بھر میں پولیس انکاؤنٹر پر مجھے تشویش ہے۔

تفصیلات کے مطابق میڈیا سے بات چیت کرتےہوئے بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ عسکریت پسندی کے خلاف انکاؤنٹر کی پالیسی زیادہ دیر نہیں چل سکتی، ماضی میں راؤ انوار کو ہٹانے پر (ن) لیگ اور پی ٹی آئی نے احتجاج کیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ سندھ میں پیپلز پارٹی نے پانچ سال خاموشی سے کام کیے، ہم نے کسی ایک شہر میں توجہ نہیں دی بلکہ پورے صوبے میں کام کیا ہے، ہماری کوشش ہے کہ ہر ضلع میں اسپتال کھولیں گے، کراچی کے کچرے کا مسئلہ حل کرنے میں کچھ وقت لگے گا۔

شریف برادران عوام کےخون کا آخری قطرہ بھی چوس لینا چاہتے ہیں، بلاول بھٹو

بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ نواز شریف نے بلوچستان کو اشتہاری مہم کے لیے استعمال کیا، بلوچستان میں (ن) لیگی کیوں مستعفی ہورہے ہیں، ہمارے مخالفین جی ٹی روڈ پر لڑائی کرتے ہیں، میمو گیٹ اور کئی جعلی خبریں ہمارے خلاف چلائی گئیں۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ فریال تالپور کے چیئر پرسن سینیٹ بننے کی جعلی خبر چلائی گئی، ہاؤس آف شریف میں لڑائی کا فائدہ سینیٹ الیکشن میں اٹھائیں گے۔

یاد رہے گزشتہ روز بلاول بھٹو نے تیل کی قیمتوں میں بے رحم اضافے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا تھا کہ عوام پر پیٹرول بم گرا کر ان سےبدلہ لیا جا رہا ہے، شریف برادران نےجاتی امراکسی نئےملک میں بنانے کی ٹھان لی ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر ضرور شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

loading...

Most Popular

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top