The news is by your side.

Advertisement

کوئی ابہام نہ رہے، وزیراعظم کا نام ٹی او آرز میں شامل کرائیں گے، بلاول زرداری

کراچی: پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ پانامہ لیکس کی پارلیمانی کمیٹی میں اپوزیشن ٹیم کو سخت موقف اختیار کرنے کی ہدایت کی ہے تاکہ ’’فرینڈلی اپوزیشن‘‘ کا شائبہ نہ جائے، ٹی او آرز میں وزیرِاعظم کا نام اہلِ خانہ کے سربراہ کے طور پر ضرور آئے گا۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے آج کراچی میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا، بلاول بھٹو زرداری نے بتایا کہ پارلیمانی کمیٹی میں اپوزیشن کی ٹیم کے سربراہ چوہدری اعتزاز احسن کو سخت موقف اختیار کرنے کی ہدایت جاری کردی گئیں ہیں،انہوں نے کہا کہ پانامہ پیپرز پر کوئی مصالحت یا مفاہمت نہیں کی جائے گی، وزیرِ اعظم نواز شریف کو اپنے اثاثہ جات کے حوالے سے تفصیلات لازمی بتانا ہونگی۔


مزید پڑھیں : پانامہ پیپرز،پارلیمانی کمیٹی کےابتدائیے پر حکومت و اپوزیش کا اتفاق


بلاول بھٹو زرداری نے واضح کیا کہ پانامہ لیکس پر اپنائی جانے والی پالیسی کی منظوری آصف علی زرداری سے لی گئی ہے، ان کی مشاورت کے بعد فیصلہ کیا گیا ہے کہ تحقیقات سے بالا تر کوئی نہیں ہے، ’’ٹی او آرز‘‘ میں وزیرِ اعظم کے اہلِ خانہ کا نام شامل کرایا جائے گا، حکومت تحقیقاتی نظام جو بھی وضع کرے اس کا آغاز وزیرِ اعظم نواز شریف کے اہل خانہ کے احتساب سے کیا جائے گا۔


مزید پڑھیں : پارلیمانی کمیٹی ٹی او آرز پر حکومت اور اپوزیشن کا ڈیڈ لاک برقرار


اس موقع پر بلاول بھٹو زرداری نے فرینڈلی اپوزیشن کے تاثر کو غلط قرار دیتے ہوئے کہا کہ پانامہ لیکس پر ہم اپنے ’’ٹی او آرز‘‘ پر ڈتے رہیں گے، اس حوالے سے کوئی شائبہنہ رہے، ان کا کہنا تھاکہ پیپلز پارٹی پانامہ پیپرز کی تحقیقات کو منطقی انجام تک پہنچائے گی۔

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں