The news is by your side.

Advertisement

امریکی عدالت نے اداکار بل کوسبی کو 10 برس قید کی سزا سنا دی

لاس اینجلس : امریکی عدالت نے معروف کامیڈین و ہالی ووڈ اداکار بل کوسبی کو جنسی زیادتی کے مقدمے میں تین سے دس سال کی سزا سناتے ہوئے جیل منتقل کرنے کا حکم دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق امریکہ کی عدالت نے ہالی ووڈ کے مزاحیہ اداکار بل کوسبی کو سنہ 2004ء میں باسکٹ بال کی سابق کھلاڑی آندریا کونسٹینڈ کو نشہ آور چیز پلاکر جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے کے جرم میں میں مجرم قرار دیا تھا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ 81 سالہ اداکار بل کوسبی نے الزمات کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ جنسی زیادتی کا محض الزام عائد کیا گیا ہے جبکہ معاملہ باہمی اتفاق سے پیش آیا تھا۔

امریکی میڈیا کا کہنا تھا کہ رواں برس اپریل میں ریاست میری لینڈ کی مونٹگمری کاؤنٹی عدالت نے بل کوسبی کو مجرم قرار دیا تھا۔

عدالت نے کوسبی کو  وحشی درندہ قرار دیا، بل کوسبی می ٹو  مہم میں سزا پانے والے پہلے اداکار ہیں، جن کے خلاف اسی مقدمے کے علاوہ کم سے کم ساٹھ خواتین اور  اداکاراؤں نے بھی جنسی طور  پر  ہراساں کرنے  اور ‘ریپ’ کا نشانہ بنائے جانے کے  الزام عائد کئے تھے۔

امریکی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ بل کوسبی نے ضمانت کے لیے درخواست جمع کروائی تھی جسے عدالت نے مسترد کرتے ہوئے 25 ہزار امریکی ڈالر جرمانہ ادا کرنے کا حکم دیا تھا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق عدالت کی جانب سے سزا سنانے کے بعد کوسبی کو کورٹ روم سے ہی ہتھکڑیاں لگا دی گئیں تھیں۔

ہالی ووڈ کے مزاحیہ اداکار بل کوسبی کے وکیل نے عدالت میں کہا کہ کوسبی کی سزا کو گھر تک محدود کیا جائے، وہ جیل میں سزا کاٹنے کے لیے بہت کمزور ہیں۔

خیال رہے کہ ہالی ووڈ اداکار کو رواں برس اپریل سے گھر میں ہی قید رکھا تھا۔

خیال رہے کہ بل کوسبی 80 کی دہائی کئ مشہور ٹی وی سیریز دی کوسبی شو کے حوالے سے مشہور ہیں جبکہ یہ دوسری باری ہے کہ اداکار کو جنسی زیادتی کے مقدمے کا سامنا کرنا پڑرہا ہے اس سے قبل جون 2017 میں جیور کسی فیصلے پر نہ پہنچ سکی تھی۔

واضح رہے کہ معروف ہالی ووڈ اداکار بل کوسبی پر ماضی میں بھی درجنوں خواتین نے جنسی زیادتی کے الزمات لگائے تاہم اداکار ان کی تردید کرتے رہے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں