The news is by your side.

Advertisement

17 سالہ لڑکی کا ریپ ، بی جے پی کا رہنما گرفتار

نئی دہلی: بھارت کی حکمراں جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی کے رہنما کو  نوجوان لڑکی سے زیادتی کے الزام میں گرفتار کرلیا گیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق بی جے پی سے تعلق رکھنے والے مقامی رہنما پر الزام تھا کہ انہوں نے چار سال سال قبل 17 سالہ لڑکی کو ممبئی میں اغوا کے بعد بندوق کے زور پر زیادتی کا نشانہ بنایا۔

اکتالیس سالہ رہنما نے لڑکی کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کی تو خاتون نے اُس کی حرکت پر سخت ردعمل دیا جس کے بعد بی جے پی کے انتہاء پسند لڑکی کو اغوا کر کے اپنے ساتھ لے گئے۔

پولیس حکام کے مطابق ملزم نے 2015 میں لڑکی کو زیادتی کا نشانہ بنایا اور پھر اُس کے بعد مزید خواہش مٹانے کے لیے اُسے بلیک میل بھی کیا، آخری بار چند دن قبل ملزم نے لڑکی کو دھمکایا جس پر اُس نے اپنے اہل خانہ کو ساری صورتحال سے آگاہ کردیا۔

پولیس حکام نے اہل خانہ کی جانب سے درخواست دائر ہونے کےبعد ایک ہفتے قبل مقدمہ درج کی جس میں زیادتی اور بچوں کے تحفظ کی دفعات شامل کی گئیں۔

پولیس نے ملزم کا نام ظاہر نہیں کیا البتہ یہ ضرور بتایا کہ گرفتار شخص کو عدالت میں پیش کیا گیا جہاں جج نے مزید تفتیش کے لیے 21 جولائی تک اُسے ریمانڈ پر بھیج دیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں