بھارت میں بسنے والے مسلمان پاکستانی ہیں، تمام مسلمانوں کو پاکستان یا بنگلادیش بھیج دو
The news is by your side.

Advertisement

بھارت میں بسنے والے مسلمان پاکستانی ہیں، تمام مسلمانوں کو پاکستان یا بنگلادیش بھیج دو، ونے کٹیار

نئی دہلی : بی جے پی کے ممبر پارلیمنٹ ونے کٹیار نے مطالبہ کیا ہے کہ بھارت میں بسنے والے مسلمان پاکستانی ہیں، تمام مسلمانوں کو پاکستان یا بنگلادیش بھیج دو، ان کا اب بھارت میں کوئی کام نہیں۔

تفصیلات کے مطابق سیکولر بھارت کا مکروہ چہرہ پھر سامنے آگیا، مودی سرکار کاایم پی اے بھارتی مسلمانوں کے خلاف زہراگلنے لگا، بی جے پی کے ایم پی اے ونے کٹیار تو انتہا پسندی کی بھی انتہا پر پہنچ گئے۔

نفرت کی بنیاد پر قائم ہونے والی بی جے پی کے ونے کٹیار کا کہنا ہے کہ بھارت کے تمام مسلمانوں کو پاکستان یابنگلادیش بھیج دو، مسلمانوں کا اب بھارت میں کوئی کام نہیں اور تاج محل کی جگہ تیج مندر قائم کیا جائے۔

ونے کٹیار نے مسلمانوں پر ہندوستان کی تقسیم کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ مسلمانوں کو اس ملک میں نہیں رہنا چاہیے، انھی کی وجہ سے اس ملک کی تقسیم ہوئی تھی، ایک قانون بنایا جانا چاہئے جس میں ایسے لوگوں کے لئے سزا کا ہو جو وندے ماترم نہیں گاتے ہیں اور جو قومی پرچم کی توہین کرتے ہیں۔


مزید پڑھیں : وقت آگیا ہے کہ بھارت سے مسلمانوں کو نکالا جائے ، سادھوی پراچی


اس سے قبل مسلم ممبر کانگریس اسدالدین اویسی کا کہنا تھا کہ وقت آگیا ہے کہ مسلمانوں کے خلاف نفرت کو ختم ہونا چاہئے، ایک ایسا قانون لانا چاہئے، جس کے ذریعہ ان لوگوں پر سخت کارروائی کی جائے، جو ہندوستانی مسلمانوں کو پاکستانی کہتے ہیں۔

سنجیدہ حلقوں کی جانب سے مطالبہ کیا جارہا ہے کہ بھارت کا نام ان ممالک کی فہرست میں ڈالا جائے، جہاں اقلیتیں غیر محفوظ ہیں۔ اور جب تک بھارت میں اقلیتوں کے خلاف نفرت کی سیاست کی جارہی ہے، بھارت کو دہشت گرد ملکوں کی فہرست میں ڈالا جائے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں