امریکی وزراء کو بلیک لسٹ کرنے کی فہرست تیار ہے، ترکی کا رد عمل Turkey's reaction
The news is by your side.

Advertisement

امریکی وزراء کو بلیک لسٹ کرنے کی فہرست تیار ہے، ترکی کا رد عمل

امریکا نے پاردی کی گرفتاری میں اہم کردار ادا کرنے والے دو ترک وزراء پر پابندی عائد کردی

واشنگٹن/انقرہ : امریکا کی جانب سے ترک وزراء پر پابندی عائد کیے جانے پر ترک حکام نے کہا ہے کہ ’امریکا نے جارحانہ رویہ ترک نہیں کیا تو ترکی کے پاس امریکی وزراء کی طویل فہرست موجود ہے جنہیں کالعدم کیا جاسکتا ہے‘۔

تفصیلات کے مطابق ترکی میں امریکی پادری اینڈریو براؤنسن کی گرفتاری میں اہم کردار ادا کرنے والے ترک وزیر قانون و انصاف عبدالحمید گل اور وزیر داخلہ سلیمان سویلو پر امریکا نے پابندیاں عائد کردی ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ ترکی فورسز کی زیر حراست امریکی پادری اینڈریو براؤنسن پر سنہ 2016 کی ناکام فوجی بغاوت میں مبینہ دہشت گردی اور کالعدم سیاسی گروپ سے تعلقات کا الزام ہے۔

امریکی میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وائٹ ہاوس کی ترجمان سارا سینڈر نے کہا ہے کہ ’ہمیں یقین ہے کہ متاثرہ پادری اینڈریو براؤنسن کے ساتھ غیر منصفانہ اور ظالمانہ رویہ اختیار کیا جارہا ہے‘۔

سارا سینڈر کا کہنا تھا کہ ’ہمیں ایسا کوئی ثبوت نہیں ملا جس سے پادری براؤنسن پر لگائے جانے والے الزامات ثابت ہوسکیں‘۔

وائٹ ہاوس کی ترجمان کا کہنا ہے کہ ’امریکی پادری کی گرفتاری میں ترکی کے دو وزیروں نے اہم کردار ادا کیا تھا‘ حکام نے امریکا میں موجود ترک وزیروں کی املاک اور اثاثے منجمد کردیے گیے ہیں اور امریکی شہریوں کو مذکورہ وزیروں کے ساتھ تجارت کو بھی ممنوع قرار دیا ہے۔

سارا سینڈر کا کہنا تھا امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے پادری کے معاملے پر ترک ہم منصب سے بارہا بات چیت کی گئی ہے، لیکن ترکی کی جانب سے کوئی مثبت جواب نہیں دیا گیا۔

دوسری جانب ترکی نے وفاقی وزراء پر پابندی عائد کیے جانے پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے مؤقف اختیار کیا کہ امریکا کی جانب سے پادری اینڈریو براؤنسن کی آزادی کا مطالبہ کسی صورت قبول نہیں کیوں کہ مذکورہ پادری نے ترکی کے دشمنوں کا ساتھ دیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ بدھ کے روز ترکی کے وزیر خارجہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا تھا کہ ’ہم امریکا سے پادری کے معاملے پر لیے گئے غلط فیصلے سے پیچھے ہٹنے کا مطالبہ کرتے ہیں‘۔

ترک وزارت خارجہ کا جاری بیان میں کہنا تھا کہ ’ترک حکام امریکا کا جارحانہ رویہ ہرگز برداشت نہیں کریں گے‘۔

امریکا کی طرف سے ترک وزراء پر پابندیوں کے اعلان کے بعد ترک وزارت خارجہ نے سخت برہمی کا اظہار کیا ہے۔ وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ ہمارے پاس بھی امریکی عہدیداروں کی ایک طویل فہرست موجود ہے جنہیں ہم بلیک لسٹ کرسکتے ہیں۔ ان میں کئی سینیر امریکی وزراء بھی شامل ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں