The news is by your side.

Advertisement

برطانوی وزیر خارجہ کو روسی مسخروں نے بیوقوف بنادیا

لندن: روس کے دو مزاحیہ اداکاروں نے برطانوی وزیر خارجہ بورس جانسن کو بیوقوف بنادیا، آرمینیا کا وزیر اعظم بن کر برطانوی وزیر خارجہ سے 18 منٹ تک ٹیلی فون پر گفتگو کی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق روس کے دو مسخروں نے نقلی روپ دھار کر برطانوی وزیر خارجہ بورس جانسن کو ماموں بنادیا، روسی مسخروں نے بورس جانسن کو فون کیا اور آرمینیا کے وزیر اعظم بن کر 18 منٹ تک ملکی و غیر ملکی صورتحال پر گفتگو کرتے رہے، یہی نہیں مسخروں نے گفتگو کو ریکارڈ کرکے سوشل میڈیا وائرل کردیا۔

برطانوی وزیر خارجہ کافی دیر تک لاعلم رہے تاہم جیسے ہی آڈیو کال سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی تو بورس جانسن کو علم ہوا، وزارت خارجہ نے معاملے کی سنگینی کا احساس کرتے ہوئے واقعے کی تحقیقات کا حکم دے دیا۔

برطانوی وزارت خارجہ نے واقعے پر کسی بھی قسم کے تبصرے سے گریز کیا ہے تاحال دونوں روسی مزاحیہ کرداروں کے مقاصد کا علم نہیں ہوسکا ہے کہ انہوں نے کس مقصد کے لیے بورس جانسن کو کال کی تھی۔

خیال رہے کہ روسی مسخرے الیکزی اسٹولیا روو اور ویلادی میر کزنیٹسوو دنیا کی کئی اہم شخصیات کی ہو بہو آواز میں بات کرنے کی مہارت رکھتے ہیں۔

اس سے قبل وہ خود کو روس کا صدر ولادی میر پیوٹن ظاہر کرکے معروف گلوکار ایلٹن جون کو بیوقوف بناچکے ہیں، اسی طرح ایک مرتبہ یوکرائن کے صدر کی آواز میں ترک صدر اردوان سے بھی بات چیت کرچکے ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں