The news is by your side.

Advertisement

لاہور: سروسز اسپتال میں جھگڑا‘ مریضہ کا بھائی جاں بحق

لاہور: لاہور کے سروسز اسپتال میں لواحقین اور اسپتال انتظامیہ کے درمیان جھگڑے کے نتیجے میں مریضہ کا بھائی جاں بحق ہوگیا۔

تفصیلات کے مطابق لاہور کے سروسز اسپتال میں اسپتال انتظامیہ اور مریضہ کے لواحقین میں جھگڑا ہوا جس کے نتیجے میں تشدد سے زخمی ہونے والا مریضہ کا بھائی سنیل دم توڑ گیا۔

پولیس کے مطابق مریضہ کا بھائی سنیل سیکیورٹی گارڈزکے تشدد سے زخمی ہوا تھا جوبعدازاں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے اسپتال میں ہی دم توڑ گیا، سنیل موٹروے پولیس کا کانسٹیبل تھا۔

سروسزاسپتال میں عملے کے تشدد سے سنیل کی موت کا مقدمہ اس کے بھائی کی مدعیت میں تھانہ شادمان میں درج کیا گیا، مقدمے میں ڈاکٹرسلمان،عرفان، حسن، سمیت نامعلوم ڈاکٹر، نامعلوم سیکیورٹی گارڈ اور انتظامیہ کو بھی نامزد کیا گیا ہے۔

وزیراعلیٰ پنجاب کا سروسزاسپتال میں افسوس ناک واقعےکا نوٹس

وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف نے لاہور کے سروسز اسپتال میں پیش آنے والے افسوس ناک واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے صوبائی وزیرصحت اور سیکرٹری صحت سے رپورٹ طلب کرلی۔

خیال رہے کہ سروسزاسپتال میں جھگڑا ڈاکٹر کے سنیل کو تھپڑ مارنے پر ہوا۔

لاہور میں ینگ ڈاکٹرز کازخمی شہری پرتشدد

یاد رہے کہ 29 دسمبر2016 کو لاہورمیں توقیر نامی شہری موٹرسائیکل سے گر کرزخمی حالت میں جنرل اسپتال کی ایمرجنسی پہنچا تھا، جہاں علاج کے لیےاصرار کرنے پر ڈیوٹی پر موجود ڈاکٹرں نے زخمی شہری کوبیہمانہ تشدد کا نشانہ بنایا تھا۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں