The news is by your side.

نیشنل ایکشن پلان پر غیرملکی سفیروں کو بریفنگ، دہشت گردی کے خلاف پاکستان کے کردار پر روشنی

اسلام آباد: دفترخارجہ میں غیرملکی سفیروں کو نیشنل ایکشن پلان پر بریفنگ دی گئی، اس دوران دہشت گردی کے خلاف پاکستان کے کردار پر روشنی ڈالی گئی۔

تفصیلا ت کے مطابق سیکریٹری خارجہ اور سیکریٹری داخلہ نے غیرملکی سفیروں کو بریفنگ دی، سیکریٹری داخلہ نے دہشتگردی کے خلاف جنگ میں پاکستان کے کردار سے آگاہ کیا۔

سیکریٹری داخلہ اعظم سلیمان کا کہنا تھا کہ یکم جنوری کو دہشت گردی اور انتہاپسندی کیخلاف اقدامات کا فیصلہ کیا، اقدامات کا فیصلہ قومی سلامتی کمیٹی میں کیا گیا۔

انہوں نے بتایا کہ کمیٹی نے نیشنل ایکشن پلان پر عمل درآمد تیز کرنے پر اتفاق کیا، حالیہ ایکشن کالعدم تنظیموں اور انفرادی شخصیات کے خلاف ہورہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ کالعدم تنظیموں اور افراد پر مالی پابندیوں پر عمل درآمد کرایا جارہا ہے، ان تنظیموں اور افراد کے اثاثے منجمد کیے جارہے ہیں، پاکستان دہشتگردوں کیخلاف انتظامی، قانونی اقدامات کررہا ہے۔

سیکریٹری داخلہ کا مزید کہنا تھا کہ عالمی ذمہ داری کے مطابق دہشت گردوں کی فنانسنگ بند کی جارہی ہے۔

دریں اثنا ترجمان دفتر خارجہ کا کہنا تھا کہ حالیہ اقدامات ٹھوس اور مستند اور ناقابل واپسی ہیں، ایکشن دہشت گردی، انتہاپسندی کے خاتمے تک جاری رہیں گے۔

ایل او سی پر سیزفائر کی خلاف ورزی : بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کی دفتر خارجہ طلبی

دوسری جانب پاکستان نے یکم اور دو اپریل کو بھارتی فوج کی جانب سے سیز فائر کی خلاف ورزی پر بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کو طلب کر کے شدید احتجاج کیا، ترجمان دفتر خارجہ محمد فیصل نے مطالبہ کیا کہ بھارت2003 کے سیز فائر سمجھوتے پر عمل درآمد یقینی بنائے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں