برطانیہ میں کتوں کا گوشت کھانے پر پابندی کا مطالبہ -
The news is by your side.

Advertisement

برطانیہ میں کتوں کا گوشت کھانے پر پابندی کا مطالبہ

لندن: برطانیہ میں کتوں کا گوشت کھانے پر پابندی لگانے کا مطالبہ زور پکڑنے گا۔

برطانوی نشریاتی ادارے بی بی سی کے مطابق برطانوی قانون کے تحت کھلے عام کتے کے گوشت کی خرید و فروخت پر پابندی عائد ہے، تاہم اگر آپ اپنے پاس موجود کتے کو، اسے تکلیف دیے بغیر مار ڈالیں تو آپ اسے کھا سکتے ہیں۔

تاہم اب کتے کے گوشت کو کھانے پر مکمل طور پر پابندی لگانے کا مطالبہ کیا جارہا ہے۔

برطانیہ کی اسکاٹس نیشنل پارٹی کی رکن پارلیمنٹ ڈاکٹر لیزا کیمرون بھی اس کے حق میں ہیں۔

ڈاکٹر لیزا آل پارٹیز پارلیمنٹری ڈاگ ایڈوائزری ویلفیئر گروپ کی سربراہ بھی ہیں۔

ان کا کہنا ہے کہ میرا نہیں خیال پارلیمان میں کوئی اس کے خلاف کھڑا ہوگا چنانچہ اس قانون کو جلد سے جلد منظور ہوجانا چاہیئے۔

جانوروں کی بہبود کے لیے کام کرنے والی تنظیموں کا کہنا ہے کہ برطانیہ میں کتے کا گوشت کھانے کے رجحان میں اضافہ ہوا ہے تاہم ان کے پاس اس کے باقاعدہ ثبوت اور ڈیٹا موجود نہیں ہیں۔

ان کے مطابق کچھ ایشیائی ممالک میں کتے کا گوشت کھایا جاتا ہے جبکہ سوئٹزر لینڈ میں بھی اس کا رجحان ہے تاہم یہ بہت زیادہ عام نہیں۔

ان تنظیموں کا کہنا ہے کہ دیگر ممالک میں کتوں کو گوشت کے لیے قتل کرنے سے قبل بہت بری حالت میں رکھا جاتا ہے اور ان پر تشدد بھی کیا جاتا ہے۔

تنظیم کی ایک کارکن کے مطابق کتوں کے گوشت پر پابندی کا قانون امریکا میں بھی زیر غور ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ ہمارا خیال ہے کہ امریکا آنے والے ایشیائی پناہ گزین کتے کا گوشت کھاتے ہیں، ’ہمیں ڈر ہے کہ ایسا برطانیہ میں بھی نہ شروع ہوجائے‘۔


 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں