کراچی جنوبی زون میں گاڑیاں چھیننے والوں نے سرکاری گاڑیوں کو ہدف بنا لیا -
The news is by your side.

Advertisement

کراچی جنوبی زون میں گاڑیاں چھیننے والوں نے سرکاری گاڑیوں کو ہدف بنا لیا

ڈی آئی جی جنوبی نے میئر کراچی کی گاڑی چھیننے کے واقعے کا ذمہ دار ایس ایچ کو قرار دیا

کراچی: شہرِ قائد کے زون جنوبی میں سرکاری گاڑیاں چھیننے کی وارداتوں میں بے پناہ اضافہ ہوگیا ہے، میئر کراچی کی گاڑی کے علاوہ کئی دیگر سرکاری گاڑیاں بھی چھینی گئیں۔

تفصیلات کے مطابق شہرِ قائد میں گاڑیاں چھیننے کی وارداتیں کرنے والوں نے سرکاری گاڑیوں کو ہدف بنا لیا، میئر کراچی وسیم اختر کی گاڑی کے علاوہ ڈیفنس اور کلفٹن میں کئی دیگر سرکاری گاڑیاں چھیننے کی وارداتیں ہو چکی ہیں۔

پولیس کا کہنا ہے کہ سرکاری گاڑیاں چھیننے میں بین الصوبائی کار لفٹر گروہ ملوث ہے، رواں سال کے دوران 968 گاڑیاں چھینی اور چوری کی گئیں، جب کہ مختلف کارروائیوں کے دوران 420 گاڑیاں بر آمد کی گئیں۔

میئر کراچی کی گاڑی کی تلاش جاری ہے: کراچی پولیس

خیال رہے کہ اینٹی کار لفٹنگ سیل (اے سی ایل سی) اور ساؤتھ زون پولیس سرکاری گاڑیوں کی ریکوری میں اب تک ناکام رہے ہیں، ڈیفنس، کلفٹن سے رواں سال میں متعدد اعلیٰ شخصیات کی گاڑیاں چھینی جا چکی ہیں۔

دوسری طرف ڈی آئی جی ساؤتھ جاوید اوڈھو نے میئر کراچی کی گاڑی چھینے جانے کے معاملے پر بیان دیتے ہوئے کہا ہے کہ وسیم اختر کی گاڑی کی تلاش جاری ہے۔


مزید پڑھیں:  میئر کراچی وسیم اختر کی گاڑی گن پوائنٹ پر چھن گئی


انھوں نے دعویٰ کیا کہ سرکاری گاڑیاں چوری کرنے والے 2 گروہ ٹریس کر لیے گئے ہیں، پولیس میئر کراچی کی گاڑی ریکور کرانے کی کوششیں کر رہی ہے۔

ڈی آئی جی جنوبی نے میئر کراچی کی گاڑی چھیننے کے واقعے کا ذمہ دار ایس ایچ کو قرار دیا، ان کا کہنا تھا کہ ایس ایچ او جرائم روکنے کا ذمہ دار ہوتا ہے۔

جاوید اوڈھو نے بتایا کہ کچھ اور شکایتیں بھی موصول ہوئی ہیں، علاقے میں بند کرائے گئے شیشہ کیفے بھی دوبارہ کھل گئے تھے اس لیے ایس ایچ او کو معطل کر دیا گیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں