The news is by your side.

Advertisement

کرونا وائرس ، وفاقی حکومت کا واہگہ بارڈر سیل کرنے کا حکم

اسلام آباد : کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے خدشے کے پیش نظر وفاقی حکومت نے دوہفتے کے لئے واہگہ بارڈر سیل کرنے کا حکم دے دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی حکومت نے واہگہ بارڈر سیل کرنے کا حکم دے دیا ، جس کے بعد وزارت داخلہ نے اس حوالے سے نوٹی فکیشن جاری کردیا ہے، جس میں کہاگیا ہے کہ واہگہ بارڈر دو ہفتے تک سیل کرنے کا حکم جاری کیا ہے، فیصلہ کرونا وائرس کے ممکنہ پھیلاؤ کے خطرے کے پیش نظر کیا گیا۔

یاد رہے وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت قومی سلامتی کمیٹی اجلاس میں مغربی سرحدوں کو 2 ہفتے تک ہر قسم کی آمدورفت کے لیے بند کرنے فیصلہ کیا گیا تھا اور کہا تھا کرتارپور راہداری پاکستانیوں کے لیے بند رہے گی جبکہ بھارتی یاتری آسکیں گے۔

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے بتایا تھا کہ اجلاس میں فیصلہ ہوا ہےداخلی پوائنٹس کو مزید موثر بنایا جائے، اگلے15روز کیلئے تمام باردڑز بند کیے جائیں گے جبکہ داخلی راستوں پراقدامات کو مزید سخت کیا جائے گا۔

مزید پڑھیں :کورونا وائرس، قومی سلامتی کمیٹی کے فیصلے سامنے آگئے

جس کے بعد پاک افغان بارڈر کی بندش سے افغان ٹرانزٹ ٹریڈ ، نیٹو سپلائی اور دوطرفہ تجارت معطل ہے جبکہ پاکستان اورایران کے درمیان لوگوں کی آمدورفت اور تجارت بھی بند ہے۔

خیال رہے پاکستان میں کرونا وائرس سے دو افراد جاں بحق ہوچکے ہیں ، ایک مریض سعودی عرب سے اور دوسرامریض ترکی سےبراستہ دبئی وطن لوٹاتھا۔

کراچی میں کروناوائرس کے مزید تین کیسزرپورٹ ہوئے، جس کے بعد مریضوں کی تعداداُنسٹھ ہوگئی جبکہ سندھ بھرمیں مریضوں کی تعداد دوسوگیارہ تک پہنچ گئی ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں