The news is by your side.

Advertisement

کاجو کھانے والے ہوشیار

خشک میوہ کاجو (cashew) صحت کے لیے درکار بنیادی غذائیت سے بھرپور ہوتا ہے، لیکن خبردار رہیں کہ اس کے استعمال سے صحت پر منفی اثرات بھی پڑ سکتے ہیں۔

کاجو کھانے کے نتیجے میں صحت پر کس قسم کے منفی اثرات پڑ سکتے ہیں؟ عام طور سے غذائی ماہرین یہ مشورہ دیتے ہیں کہ کاجو کا استعمال ہمیشہ بھون کر کرنا چاہیے۔

کچے کاجو کے چھلکوں میں ’یوروشیول‘ (urushiol) نامی کیمیکل موجود ہوتا ہے، جو انسان کے لیے زہریلا ثابت ہو سکتا ہے، اس لیے کچے کاجوؤں کو چھلکوں سے نکال کر بھون لیا جائے، تاکہ اِن کے اندر موجود زہریلا مادہ ختم ہو جائے۔

غذائی ماہرین کے مطابق بغیر بھنے ہوئے کاجوؤں کے استعمال کے نتیجے میں جِلد پر جلن، سرخی، منہ میں خارش اور چھالے بھی پڑ سکتے ہیں، اس لیے خریدتے وقت ہمیشہ بھنے ہوئے کاجوؤں کو ترجیح دیں، یہ زیادہ محفوظ ہیں۔

کاجو کے بہت زیادہ استعمال سے بھی گریز کرنا چاہیے، ماہرین کا کہنا ہے کاجو میں بہت زیادہ توانائی ہونے کے نتیجے میں یہ دِنوں میں فربہ بھی کر سکتا ہے، اس لیے ایک دن میں زیادہ سے زیادہ 10 اور روزانہ کی بنیاد پر 3 سے 4 کاجو کا استعمال کیا جانا چاہیے۔

خیال رہے کہ کاجو کچھ افراد میں اپھار، قبض، وزن میں اضافے اور جوڑوں کی سوجن کی شکایت کا بھی سبب بن سکتا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں