The news is by your side.

Advertisement

مویشیوں نے 241 افراد کو موت کے گھاٹ اتار دیا

نئی دہلی: بھارت میں آوارہ مویشیوں نے دو سال کے دوران تقریباً 241 افراد کو ہلاک کیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق بھارتی ریاست ہریانہ میں یکم جنوری 2018 سے 2 مارچ 2020 تک آوارہ گائے نے 241 افراد کو موت کے گھاٹ اتارا۔

بھارتی میڈیا کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ گائے کی وجہ سے سڑکوں پر مختلف حادثات بھی پیش آئے جس میں درجنوں افراد ہلاک ہوئے۔ جبکہ متعدد افراد روڈز پر آوارہ گھومنے والے گائے کے حملوں کی زد میں آئے۔

سب سے زیادہ ہلاکتیں ہریانہ کے ضلع فاتح آباد اور امبالا میں ہوئیں۔ انسانی حقوق کے لیے کام کرنے والے کارکن کا کہنا ہے کہ مذکورہ ہلاکتیں میں اضافے کے امکانات بھی ہیں۔ اعداد و شمار جو سامنے آئے ہیں حقیقت میں لوگ اس سے زیادہ مرے گئے ہیں۔ متعلقہ اداروں نے واقعے پر سنجیدگی کا اظہار کیا ہے۔

کمشنر کا کہنا ہے کہ 1.5 لاکھ آوارہ مویشی تاحال ہریانہ کی سڑکوں پر دن دناتے پھر رہے ہیں۔ جبکہ 10 ہزار کے قریب جانوروں کی اموات بھی ہوئیں تاہم ان کی تعداد میں اضافہ ہورہا ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں