The news is by your side.

قومی احتساب بیورو کے ڈی جیز سمیت تمام افسران پرمیڈیا انٹرویوز دینے پر پابندی عائد

اسلام آباد : چیئرمین نیب نے ڈی جیز سمیت تمام افسران کو میڈیا انٹرویو ز پر پابندی عائد کردی، میڈیا نمائندوں سے کہا گیا ہے کہ معلومات کیلئے نیب ترجمان سے رابطہ کیا جائے۔

تفصیلات کے مطابق ڈی جی نیب لاہور شہزاد سلیم کے میڈیا کو انٹرویو کے بعد پیدا ہونے والی صورتحال کے سبب قومی احتساب بیورو کے چیئرمین جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال نے ڈی جیز سمیت تمام افسران کو میڈیا پر انٹرویو دینے پر پابندی عائد کردی ہے۔

اسلام آباد میں اجلاس سے خطاب کرتے ہوئےان کا کہنا تھا کہ نیب تمام معزز اراکین اسمبلی کا احترام کرتا ہے، نیب نے پیمرا سے ڈی جی نیب لاہور کے میڈیا کو دیئے انٹرویو کا ریکارڈ طلب کرلیا ہے جس کا قانونی جائزہ لیں گے۔

اس حوالے سے میڈیا جاری تحقیقات اور انویسٹی گیشنز کے بارے میں قیاص آرائیوں سے گریز کرے, انہوں نے کہا کہ میڈیا نمائندگان کسی کیس کے حوالے سے معلومات حاصل کرنے کیلئے نیب ترجمان سے رابطہ کریں۔

مزید پڑھیں: شہباز شریف کی مزید کیسز میں بھی گرفتاری ہوگی، ڈی جی نیب لاہور

ان کا کہنا تھا کہ ڈی جی نیب لاہور کے انٹرویو کی ویڈیو دیکھ کر پتہ لگایا جائے گا کہ انہوں نے ایسی کیا بات کہی کہ جس سے متعلق اسمبلی میں اراکین نے اعتراض کیا، اس موقع پر چیئرمین نیب کو لاہور میں تمام میگا کرپشن کیسز پر تفصیلی بریفنگ بھی دی گئی۔

جسٹس( ر) جاوید اقبال نے مزید کہا کہ قومی احتساب بیورو ملک سے بد عنوانی کے خاتمہ اور میگا کرپشن کے مقد مات کو منطقی انجام تک پہنچانے کونہ صرف اپنی اولین ترجیح قرار دیتا ہے بلکہ اس کے لیے بلا امتیاز قانون کے مطابق بد عنوان عناصر کے خلاف نیب سنجیدہ کاوشیں بھی کررہا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں