The news is by your side.

Advertisement

نیب نے حسن اور حسین نواز کو انٹر پول کے ذریعے وطن لانے کی منظوری دے دی

جو قانون پر عمل نہیں کرے گا اس سے کروایا جائے گا: چیئرمین نیب

لاہور: چیئرمین نیب جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کا کہنا تھا کہ قانون پر عمل درآمد ضروری ہے۔ جو قانون پر عمل نہیں کرے گا اس سے کروایا جائے گا۔ نیب کے نوٹس دعوت نامے نہیں۔

تفصیلات کے مطابق چیئرمین نیب جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال نے کہا کہ ہمارے کوئی سیاسی عزائم نہیں۔ کسی پارٹی کو ٹارگٹ نہیں کیا جا رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ لوگ الیکشن مہم چلائیں اور جب نیب بلائے تو پیش ہوں۔ کرپشن کے خاتمے کے لیے نیب الیکشن سے پہلے بھی کام کر رہا تھا۔ الیکشن کے بعد بھی کرپشن کے خاتمے تک مہم جاری رہے گی۔

چیئرمین نیب کا کہنا تھا کہ قانون پر عمل درآمد ضروری ہے۔ جو قانون پر عمل نہیں کرے گا اس سے کروایا جائے گا۔ نیب کے نوٹس دعوت نامے نہیں۔ نوٹس قانون کے مطابق تحقیقات کے لیے بھجوائے جا رہے ہیں۔

جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال نے مزید کہا کہ حسن اور حسین نواز کو انٹر پول کے ذریعے لانے کی منظوری دے دی، ڈی جی نیب اب خط لکھیں گے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں