The news is by your side.

Advertisement

چیف جسٹس نے وزیر اعظم کے لیے فریادی کا لفظ استعمال نہیں‌ کیا، ترجمان سپریم کورٹ

اسلام آباد: ترجمان سپریم کورٹ نے چیف جسٹس میاں ثاقب نثار سے منسوب بیان کی وضاحت دیتے ہوئے کہا ہے کہ چیف جسٹس نے وزیر اعظم کو فریادی نہیں کہا، چیف جسٹس وزیر اعظم کا احترام کرتے ہیں، مقدم سممجھتے ہیں۔

ترجمان سپریم کورٹ کے اعلامیے کے مطابق وزیر اعظم ریاست کے سربراہ ہیں، فریادی کا لفظ استعمال نہیں کیا، فریادی کا لفظ وزیر اعظم سے منسوب کرکے نشر کرنا بدنیتی ہے۔

چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے کہا کہ کئی سائل آتے ہیں میں ان کی بات سن لیتا ہوں، میرا کام فریادی کی فریاد سننا ہے پتا نہیں سائل کو کیا تکلیف ہو۔

یہ پڑھیں: ایگزیکٹوکے کاموں میں مداخلت کا کوئی شوق نہیں: چیف جسٹس

اس پر لطیف کھوسہ ایڈووکیٹ نے کہا وزیر اعظم کو کیا تکلیف ہے یہ تو سب کو ہی پتا ہے، چیف جسٹس نے اس پر کہا کہ میں نے کسی کا نام نہیں لیا صرف سائل کی بات کی ہے، میرا کام فریادی کی فریاد سننا ہے، وہ فریاد سنانے آئے تھے مگر یاد کچھ نہیں۔

یاد رہے کہ وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے بذریعہ اٹارنی جنرل چیف جسٹس میاں ثاقب نثار سے ملاقات کی خواہش کا اظہار کیا گیا تھا جس کے بعد 27 مارچ کو یہ ملاقات چیف جسٹس کے چیمبر میں 2 گھنٹے تک جاری رہی تھی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں