punjab صرف پنجاب میں13لاکھ مقدمات التواء کا شکار ہیں، جسٹس لاہورہائیکورٹ
The news is by your side.

Advertisement

صرف پنجاب میں13لاکھ مقدمات التواء کا شکار ہیں، چیف جسٹس لاہورہائیکورٹ

لاہور : چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس منصور علی شاہ نے کہا ہے کہ ہمیں5ہزار ججز اور پورا ایک اسٹرکچر چاہیے، پنجاب میں 1.3 ملین کیسز پنجاب میں التواء کا شکار ہیں۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے لاہور میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا، جسٹس منظور علی شاہ کا کہنا تھا کہ 1.3ملین کیسز1770ججز کیسے ختم کر سکتے ہیں، ہمیں5ہزار ججز چاہئیں اور پورا ایک اسٹرکچر چاہیے۔

چیف جسٹس لاہورہائیکورٹ نے مزید کہا کہ روزانہ بےشماردرخواستیں موصول ہوتی ہیں کہ آپ کیا کررہے ہیں، ہمارے اندرونی مسائل سے عام آدمی بھی بہت تنگ ہے۔

انہوں نے کہا کہ اے ڈی آر نظام کو لاگو کرنے کےبارے میں سو چ رہے ہیں، ہمارا ارادہ ہے کہ سب ججز میڈی ایشن کے کورسز کریں، ورلڈ بینک کی مدد سے اے ڈی آر سینٹر بن رہا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں