The news is by your side.

Advertisement

چینی سائنسدانوں نے اصلی سے زیادہ طاقتور’نقلی‘ سورج تیارکرلیا

چینی سائنسدانوں نے نظامِ شمسی کے سورج سے آٹھ گنا زیادہ گرم مصنوعی سورج بناکرساری دنیا کو حیران اور امریکہ پریشان کردیا ہے۔

بھارتی اخبار ٹائمز آف انڈیا کی رپورٹ کے مطابق چینی سائنسدان مصنوعی سورج بنانے میں کامیاب ہو گئے اور اس کا تجربہ بھی کر لیا گیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق تجربے کے دوران اس مصنوعی سورج کا درجہ حرارت 50ملین ڈگری سینٹی گریڈ سے بھی زائد تھا۔ یہ سورج ہیفی انسٹیٹیوٹ آف فزیکل سائنس کے ماہرین نے ایجاد کیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق انسٹیٹیوٹ کے سائنسدان ژو جیانان کا کہنا تھا کہ ”یہ مصنوعی سورج تھرمونیوکلیئر فیوژن کے عمل کے ذریعے توانائی پیدا کرتا ہے اور اس کے ذریعے لامحدود توانائی حاصل کی جا سکتی ہے۔ تجربے کے دوران اس سورج سے 102سیکنڈز تک 50ملین ڈگری سینٹی گریڈ تک توانائی حاصل کی گئی۔

یہ توانائی ہائیڈروجن کے ریڈیو ایکٹوو آئسوٹوپس کے تعامل سے حاصل کی گئی۔“ واضح رہے کہ ہائیڈروجن بم بھی اسی تھرمونیوکلیئر فیوژن کے عمل کے ذریعے تابکاری اور توانائی پیدا کرتا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں