The news is by your side.

ویڈیو: چینی خلا باز 6 ماہ بعد زمین پر اتر گئے

بیجنگ: چینی خلائی جہاز شینزو 14 کا عملہ 6 ماہ بعد اتوار کو خلائی اسپیس اسٹیشن سے واپس زمین پر آ گیا۔

تفصیلات کے مطابق چینی خلائی جہاز کا عملہ 6 ماہ بعد خلائی جہاز کے ’ری انٹری کیپسول‘ میں سوار ہو کر زمین پر واپس آ گیا ہے، عملے کو لانے والا کیپسول عین اسی جگہ اُترا جس کی نشان دہی ماہرین نے کی تھی۔

مشن میں خاتون خلا باز سمیت 3 چینی خلاباز شامل تھے، تینوں خلا نورد تیانگونگ خلائی اسٹیشن کے آخری تعمیراتی مرحلے کی نگرانی کے لیے 5 جون کو خلا میں گئے تھے اور انھوں نے اسپیس اسٹیشن میں 183 دن گزارے۔

ان خلا نوردوں کی جگہ لینے کے لیے کچھ روز قبل شینزو 15 کا عملہ خلا میں پہنچ چکا ہے۔

واضح رہے کہ چین اپنے خلائی پروگرام پر گزشتہ چند سالوں سے بہت زیادہ توجہ دے رہا ہے اور چین امریکا کے بعد خلائی پروگرام میں سرمایہ کاری کرنے والا دنیا کا سب سے بڑا ملک بن چکا ہے، جو روس اور جاپان سے بھی زیادہ مشن خلا میں بھیج رہا ہے۔

ان تین خلابازوں میں کمانڈر چن ڈونگ اور ان کی ٹیم کے ساتھی لیو یانگ (خاتون) اور کائی شوزے شامل ہیں، جو نومبر میں مکمل ہونے والے خلائی اسٹیشن کی تعمیر کے آخری اور اہم مرحلے کی نگرانی کر رہے تھے، تمام خلا نوردوں نے پہنچنے کے بعد کہا کہ لینڈنگ کے بعد وہ بالکل ٹھیک محسوس کر رہے ہیں۔

کیپسول رات 8:09 بجے (بین الاقوامی وقت کے مطابق دوپہر 12:09 پر) شمالی چین کے اندرونی منگولیا خود مختار علاقے میں ڈونگفینگ سائٹ پر  اترا، خلائی ایجنسی کے عملے نے 5 جون کو شروع ہونے والے پورے مشن کو ’مکمل کامیاب‘ قرار دیا۔ لینڈنگ سائٹ پر موجود عملے نے تھکے ہوئے نظر آنے والے عملے کو ایک ایک کر کے باہر نکالا، اور تینوں کو کیپسول سے بحفاظت نکالا گیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں