The news is by your side.

Advertisement

کروناوائرس کے علاج کیلئے دو دن کے اندر پہلا اسپتال قائم

بیجنگ: کروناوائرس کے علاج کے لیے چین میں دو دن کے اندر پہلے اسپتال کا قیام عمل میں آگیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق 500 مزدوروں نے مل کر دو دن کے اندر اندر چین میں پہلا کروناوائرس کے علاج کے لیے اسپتال قائم کرلیا۔ انتظامیہ کا کہنا ہے کہ مزید دو اسپتال جلد ہی قیام کے بعد متاثرین کے لیے کھول دیے جائیں گے۔

پہلا اسپتال چینی صوبے ہوبائی کے شہر ہوانگانگ میں بنایا گیا ہے جبکہ دیگر دو اسپتال ووہان شہر میں قائم کیے جارہے ہیں، مزدوروں نے ہنگامی بنیاد پر صرف 45 گھنٹوں کی محنت سے پہلا اسپتال قائم کیا جو عوام کے لیے کھول دیا گیا ہے۔

ہلاکت خیز کورونا وائرس نے 132 افراد کی جان لے لی

ایک ہزار بستروں پر مشتمل اسپتال میں انٹرنیٹ کی بھی سہولت میسر ہے۔ جبکہ خیال کیا جارہا ہے کہ دیگر دو اسپتال قیام کے بعد 3 اور 5 فروری کو مریضوں کے لیے کھول دیے جائیں گے، جس پر ممکنہ طور پر تیزی سے کام جاری ہے۔

خیال رہے کہ چین میں جنم لینے والے کورونا وائرس سے ہلاکتوں میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے، حکام کا کہنا ہے کہ وائرس سے ہلاک ہونے والے افراد کی تعداد 132 تک پہنچی گئی ہے جبکہ فرانس میں بھی کورونا وائرس کے 3 کیس رپورٹ ہوچکے ہیں۔ چینی حکام کی جانب سے 6 ہزار کے قریب افراد میں اس ہلاکت خیز وائرس کی تصدیق ہوچکی ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں