The news is by your side.

Advertisement

جنرل سلیمانی کے قتل میں ملوث سی آئی اے ٹیم کا سربراہ ہلاک، ایرانی میڈیا کا دعویٰ

تہران: ایرانی میڈیا نے دعویٰ کیا ہے کہ جنرل سلیمانی کے قتل میں ملوث سی آئی اے ٹیم کا سربراہ ہلاک ہو گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کے قتل میں ملوث سی آئی اے ٹیم کا سربراہ ہلاک ہو گیا، ایرانی میڈیا نے دعویٰ کیا ہے کہ سی آئی اے ٹیم کا سربراہ افغانستان میں تباہ ہونے والے طیارے میں سوار تھا۔

تاہم امریکی فوجی حکام نے اس دعوے کو مسترد کر دیا ہے، حکام نے کہا ہے کہ غزنی میں تباہ ہونے والے فوجی طیارے میں سی آئی اے کا کوئی اہل کار نہیں تھا۔

یاد رہے کہ 27 جنوری کو افغان طالبان نے دعویٰ کیا تھا کہ انھوں نے غزنی میں امریکی فوجی طیارہ مار گرایا ہے، طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد اور ایک مقامی صحافی کا کہنا تھا کہ طیارے میں موجود تمام امریکی ہلاک ہو گئے ہیں۔

امریکا نے فوجی طیارے کی تباہی کی تصدیق کر دی

گزشتہ روز امریکی فوجی حکام نے طیارے کی تباہی کی تصدیق کر دی تھی تاہم طالبان کی جانب سے طیارے کو مار گرانے کے دعوے کی تردید بھی کی، فوجی حکام کا کہنا تھا کہ طیارے کے دشمن کے فائر سے تباہ ہونے کے کوئی اشارے نہیں ملے۔ یہ بھی کہا گیا کہ امریکی فضائیہ کا طیارہ تکنیکی خرابی کے باعث گر کر تباہ ہوا۔

خیال رہے کہ جمعہ 3 جنوری کو بغداد میں ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کو امریکا نے ایک ڈرون حملے میں راکٹوں کا نشانہ بنا کر ہلاک کر دیا تھا، جس کے بعد ایران نے بھی بغداد میں واقع امریکی فوجی اڈوں پر راکٹ برسائے، چند دن قبل بغداد میں امریکی سفارت خانے پر بھی راکٹ داغے گئے تھے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں