The news is by your side.

Advertisement

چیف جسٹس ثاقب نثار نے 12 مئی کیس کی فائل طلب کرلی

کراچی : چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار نے 12 مئی کیس کی فائل طلب کرتے ہوئے کہا کہ 12 مئی کو کراچی میں المناک واقعہ ہوا، شہدا کے لیے فاتحہ خوانی کرنی چاہیے۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں بارہ مئی کے اہم مقدمے کی سماعت بھی ہوئی، چیف جسٹس نے بارہ مئی کیس کی فائل طلب کرتے ہوئے کہا بارہ مئی کو کراچی میں المناک واقعہ ہوا، شہدا کے لیے فاتحہ خوانی کرنی چاہیے

سپریم کورٹ رجسٹری میں بارہ مئی کے شہدا کے لیے فاتحہ خوانی کی گئی۔

چیف جسٹس نے فیصل صدیقی سے استفسار کیا کہ کیا سانحہ بارہ مئی کی تحقیقات نہیں ہوئیں، جس پر فیصل صدیقی نے بتایا سندھ ہائی کورٹ میں معاملہ زیر سماعت ہے، جس پرچیف جسٹس نے کہا آپ کیس نمبر دیں ہم جائزہ لیں گے۔

خیال رہے کہ آج بارہ مئی کو کراچی میں جلسے منعقد کئے جارہے ہیں ، گیارہ برس پہلے 2007 میں آج ہی کے دن شہر میں آگ و خون کی ہولی کھیلی گئی ۔ درجنوں افراد جان سے گئے۔

روشنیوں کے شہر کراچی میں بارہ مئی دو ہزار سات کا دن تاریخ کا سیاہ ترین دن تصور کیا جاتا ہے، یہ دن شہریوں میں خوف وہراس کی ایک علامت بن کر ابھرا ، آج کے دن شدید ہنگامے برپا ہوئے اور قیامت خیز دن 40 شہریوں کی زندگی نگل گیا جبکہ درجنوں زخمی ہوئے۔

سانحہ 12 مئی کی تفتیش کی گاڑی کچھ ملزمان کی گرفتاری سے آگے نہ بڑھ سکی۔ وکلا کا کہنا ہے کہ سانحہ کا ذمہ دار کوئی بھی ہو، انصاف ہونا چاہیئے۔

سانحے میں ہلاک ہونے والوں کے لواحقین آج بھی اپنے پیاروں کے خون ناحق کا انصاف کیے جانے کے منتظر ہیں۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں