The news is by your side.

Advertisement

مودی ’فلم ڈائریکٹر‘ کے قدموں میں گر پڑے

اروند کیجریوال نے متنازع بھارتی فلم پر مودی حکومت کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا ہے کہ مودی فلم ڈائریکٹر کے قدموں میں گرپڑے ہیں۔

وزیراعلیٰ دہلی اروند کیجریوال نے بجٹ اجلاس کے دوران خطاب کرتے ہوئے متنازع بھارتی فلم دی کشمیر فائلز کو بی جے پی کی جانب سے ٹیکس فری قرار دینے پر مودی حکومت کو آڑے ہاتھوں لیا ہے اور کہا ہے کہ بی جے پی کے لوگ کشمیر فائلز کو ٹیکس فری قرار دینے کا مطالبہ کررہے ہیں اسے آپ ٹیکس فری کیوں کرارہے ہو وویک اگنی ہوتی کو بول دو یوٹیوب پر ڈال دے گا سب فلم دیکھ لیں گے اور فری ہی فری ہوجائے گی۔

 انہوں نے کہا کہ اگر 8 سال تک حکومت کرنے کے بعد بھی کسی ملک کے وزیراعظم کو فلم کے ڈائریکٹر وویک اگنی ہوتری کے قدموں میں گرنا پڑے تو اس کا مطلب کہ وزیراعظم فیل ہے اس نے کوئی کام نہیں کیا۔

کیجریول نے مزید کہا کہ کشمیری پنڈت کے نام پر کوئی فلم بنا کر کروڑوں کما گیا اور بی جے پی کو پوسٹر لگانے کا کام دے دیا ہے،

اروند کیجریوال نے کہا کہ ایک فلم بنٹی اور ببلی تھی اس میں نعرہ تھا کہ ہمارے مطالبات پورے کرو اور مطالبے کا پتہ ہی نہیں تھا اس کے ساتھ ہی انہوں نے طنزیہ انداز میں کہا کہ 56 انچ کا سینہ ہوتا ہے لیکن اب تو مان لو کہ 56 انچ کا سینہ نہیں ہے سب جھوٹ ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں