The news is by your side.

Advertisement

وزیراعلیٰ پنجاب کے حکم پر وزیر اطلاعات فیاض چوہان مستعفی

لاہور:  وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کے حکم پر صوبائی وزیر اطلاعات فیاض چوہان مستعفی ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق فیاض الحسن چوہان کے ہندو برادری سے متعلق متنازع بیان کے بعد وزیر اعلیٰ پنجاب نے انھیں استعفیٰ دینے کی ہدایت کی، وزیر اعظم نے وزیراعلیٰ پنجاب کو آج ہی ایکشن لینے کا حکم دیا تھا، جس کے بعد یہ کارروائی عمل میں آئی۔

وزیر اعظم کی ہدایت


وزیر اعظم عمران خان کی جانب سے یہ واضح کیا گیا ہے کہ اس نوع کا کوئی بھی بیان قابل قبول نہیں.

وزیر اعظم کا کہنا ہے کہ  کسی بھی مذہب کی دل آزاری قبول نہیں ہوگی۔ وزیراعظم نے تمام وفاقی اورصوبائی وزراکو ایسےمعاملات پرمحتاط رہنےکی ہدایت کی ہے۔

ترجمان وزیر اعلیٰ پنجاب کا موقف


ترجمان وزیر اعلیٰ  پنجاب شہباز گل نے اپنے ویڈیو بیان میں کہا ہے کہ وزیراعلیٰ پنجاب نے فیاض الحسن چوہان سے ملاقات کی ، جس کے بعد انھوں نے عہدے سے مستعفیٰ ہونےکافیصلہ کیا۔ 

شہباز گل کے مطابق وزیر اعلیٰ پنجاب نے واضح کیا ہے کہ ایسے بیان کی اجازت نہیں دےسکتےجس سے اقلیتی برادری کو تکلیف ہو۔

مزید پڑھیں: وزیراطلاعات پنجاب نے ہندوبرادری سے متعلق بیان پر معذرت کرلی

تجزیہ کاروں کے مطابق صمصام بخاری کو  پنجاب کا نیا وزیراطلاعات بنائے جانے کا امکان قومی امکان ہے، البتہ کوئی اور نام بھی سامنے آسکتا ہے.

یاد رہے کہ وزیر اطلاعات پنجاب ابتدا ہی سے اپنے بیانات کے باعث تنازعات کا شکار رہے. ماضی میں‌ بھی انھیں‌ ایک اداکارہ سے متعلق اپنے غیر محتاط بیان پر معافی مانگنی پڑی تھی.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں