The news is by your side.

Advertisement

پیپر لیک، وزیر اعلیٰ پنجاب کا اے آر وائی نیوز کی خبر پر ایکشن

لاہور: اے آر وائی نیوز کی خبر پر ایکشن لیتے ہوئے وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے پنجاب پبلک سروس کمیشن میں پیپر لیک اسکینڈل کا نوٹس لے لیا۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعلیٰ پنجاب نے پبلک سروس کمیشن کے پرچے لیک کیے جانے کے اسکینڈل کی خبر پر ایکشن لیتے ہوئے چیئرمین سی ایم آئی ٹی کی سربراہی میں انکوائری کمیٹی قائم کر دی۔

چیئرمین علی مرتضیٰ کی سربراہی میں قائم یہ کمیٹی 5 دن کے اندر رپورٹ پیش کرے گی۔

وزیر اعلیٰ عثمان بزدار نے اس موقع پر کہا کہ پنجاب پبلک سروس کمیشن قومی ادارہ ہے، اس کی ساکھ کو تباہ کرنے کی اجازت نہیں دیں گے، ادارے کی ساکھ کا دفاع کرنے کے لیے پس پردہ عناصر کو سامنے لایا جائے گا۔

پبلک سروس کمیشن کا پیپر لیک کرنے والے 4 افرادگرفتار

عثمان بزدار کا کہنا تھا کہ سی ایم آئی ٹی ٹیم گینگ کی پشت پناہی کرنے والوں کو بے نقاب کرے گی، اور معاونت کرنے والے افسران کو بھی قانون کے کٹہرے میں لایا جائے گا۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز پبلک سروس کمیشن کا پیپر لیک کرنے کے الزام میں اینٹی کرپشن نے 4 افراد کو گرفتار کیا تھا، جن میں سے غضنفر نامی شخص ڈیپارٹمنٹ کا ملازم تھا، دوسرا ملزم وقار پبلک سروس کمیشن میں ڈیٹا آپریٹر تھا، اینٹی کرپشن حکام کا کہنا ہے کہ ملزمان پہلے بھی کافی پرچے لیک کر کے فروخت کر چکے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں