The news is by your side.

Advertisement

وزیراعلیٰ سندھ کا اسٹریٹ کرائمز کی روک تھام کیلئے آج اہم فیصلوں کا اعلان

کراچی : وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے اسٹریٹ کرائمز کی روک تھام کیلئے آج اہم فیصلوں کا اعلان کرتے ہوئے کہا میں خود کو اور حکومت کو بری الذمہ قرار نہیں دے رہا۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کراچی میں اسٹریٹ کرائم کا بڑھ جانا تشویشناک ہے، اسٹریٹ کرائم کنٹرول کرنےکیلئےسندھ کابینہ کااجلاس بلاؤں گا۔

مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ مجھےہرحال میں عوام کےجان و مال کومحفوظ بناناہے۔میں اس حوالے سےکچھ سخت اقدامات کروں گا، اسٹریٹ کرائم کی وارداتوں پر بہت تشویش ہے اور اطہر متین کی موت پر بہت افسوس ہے۔

وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ کچھ عرصہ پہلے آئی جی صاحب کی مشاورت سے تبدیلی لائےتھے، اسٹریٹ کرائم کی وارداتوں کیخلاف 4بجے اہم اجلاس ہے ، جس میں اسٹریٹ کرائم کی روک تھام کیلئےاہم فیصلے کئے جائیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ میں اس میں خود کو اور حکومت کوبری الزمہ قرار نہیں دے رہا، ملک کے معاشی حالات کی وجہ سے کرائم زیادہ بڑھا ،ہر ملک کے شہری یہاں موجود ہیں ، افغانستان میں جو کچھ ہو رہاہے وہ بھی ہمیں بھگتنا پڑتاہے ، پولیس والے جو بھی ملوث ہونگے اس کو سزا ملے گی۔

نیشنل ایکشن پلان کے حوالے سے مراد علی شاہ نے بتایا کہ سندھ حکومت نے اپیکس کمیٹی کے 26 اجلاس کئے ، نیشنل ایکشن پلان تبدیل کردیا، جلدپھرایپکس اجلاس بلائیں گے ، ایسے سروے سے مجھ میں اور کام کرنے کا جذبہ پیدا ہوتا ،وزیر اعلی سندھ

وزیراعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ مہنگائی کا طوفان بےروزگاری جیسے مسائل پربلاول لوگوں کےپاس جارہے ہیں ، عمران خان سے یہ مسائل حل نہیں ہوں گے انہیں جانا ہوگا۔

اطہر متین قتل کے حوالے سے انھوں نے کہا کہ اطہر متین کیس میں کچھ پیش رفت ہوئی ہے ابھی نہیں بتا سکتا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں