The news is by your side.

Advertisement

ملک میں فرنٹ لائن ہیلتھ ورکرز پر کرونا کے حملوں میں تیزی آ گئی

اسلام آباد: ملک میں فرنٹ لائن ہیلتھ ورکرز پر کرونا کے حملوں میں تیزی آ گئی ہے، گزشتہ 24 گھنٹوں میں ملک میں مزید 37 ہیلتھ کیئر ورکرز میں کرونا وائرس کی تصدیق ہو گئی۔

ذرائع کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک بھر میں 29 ڈاکٹر،1 نرس، اور 7 ہیلتھ ورکرز میں کرونا وائرس کی تصدیق ہو گئی ہے، جس سے ملک میں کرونا سے متاثرہ ہیلتھ ورکرز کی مجموعی تعداد 16975 ہو گئی۔

ذرائع وزارت صحت کا کہنا ہے کہ اب 10169 ڈاکٹرز، 2406 نرسز، اور 4400 ہیلتھ اسٹاف کرونا پازیٹو ہو چکے ہیں، جب کہ ملک میں تاحال 166 ہیلتھ ورکرز کرونا انفیکشن سے جاں بحق ہو چکے ہیں۔

وزارت صحت کے مطابق اس وقت 409 ہیلتھ ورکرز گھر پر، اور 28 اسپتالوں میں زیر علاج ہیں، ملک میں 16372 ہیلتھ ورکرز کرونا سے صحت یاب ہو چکے ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ کرونا سے متاثرہ اور جاں بحق ہونے والے بیش تر ہیلتھ ورکرز کا تعلق سندھ سے ہے، سندھ میں 5970 ہیلتھ ورکرز پازیٹو، 58 جاں بحق ہو چکے ہیں، دوسرے نمبر پر پنجاب ہے جہاں 3489 ہیلتھ ورکرز پازیٹو ہوئے، جب کہ 29 جاں بحق ہو چکے ہیں۔

خیبر پختون خوا میں 4005 ہیلتھ ورکرز پازیٹو ہوئے، اور 44 جاں بحق ہو چکے ہیں، اسلام آباد میں 1560 ہیلتھ ورکرز پازیٹو ہوئے، اور 14 جاں بحق ہو چکے ہیں، گلگت بلتستان میں 290 ہیلتھ ورکرز پازیٹو ہوئے جب کہ 3 جاں بحق ہو چکے ہیں۔

بلوچستان میں 853 ہیلتھ ورکرز پازیٹو ہوئے اور 9 جاں بحق ہو چکے ہیں، آزاد کشمیر میں 808 ہیلتھ ورکرز پازیٹو ہوئے جب کہ 9 جاں بحق ہو چکے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں