The news is by your side.

Advertisement

کورونا وائرس : عالمی ادارہ صحت کی دنیا کے امیر ممالک سے درد مندانہ اپیل

عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او ) کے سربراہ ٹیڈروس ادھانوم گیبریسس نے کورونا ویکسین کی سودے بازی کی مخالفت کرتے ہوئے پوری دنیا میں اس کی یکساں تقسیم پر زور دیا۔

ڈبلیو ایچ او نے کورونا ویکسین کی سپلائی کے سلسلے میں امیر ممالک سے اپیل کی ہے کہ وہ غریب اور پسماندہ ترین ملکوں تک کورونا کی ویکسین کو پہنچانے میں اس کی مدد کریں۔

جنیوا میں ایک پریس کانفرنس کے دوران ڈبلیو ایچ او کے سربراہ نے کہا کہ ڈبلیو ایچ او کے تقسیمِ ویکسین نظام ’کووَیکس‘ نے ویکسین کی دو کروڑ خوراکوں کا معاہدہ کیا ہے لیکن امیر ممالک دو طرفہ سودے کرکے ویکسین کی اضافی سپلائی کررہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ میں ان ممالک سے اپیل کرتا ہوں جن کو وافر مقدار میں ویکسین مہیا ہیں، وہ فوراً کووَیکس کو بھی ویکسین مہیا کروائیں۔ اب تک 42 ممالک نے ویکسینشن کا عمل شروع کردیا ہے جن میں 36 اعلیٰ آمدنی اور چھ متوسط آمدنی والے ممالک شامل ہیں۔

ٹیڈروس گیبریسس نے مزید کہا کہ ویکسین ساز کمپنیاں اور امیر ممالک ویکسین کے سلسلے میں دو طرفہ سودے کرنا بند کریں اور زیادہ سے زیادہ ویکسین بنانے اور اس کی یکساں تقسیم پر زور دیں۔

امیر ممالک نے شروعات میں ہی کئی ویکسین خریدی ہیں اس سے ممکنہ طور پر تمام ملکوں کے لیے ویکسین کی قیمت بڑھ جائے گی جس سے انتہائی غریب اور پسماندہ ممالک کو ویکسین نہیں مل پائے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں