The news is by your side.

Advertisement

کرونا وائرس نے بھارت کے امیر ترین افراد کے کھربوں روپے ڈبو دیے

نئی دہلی: کرونا وائرس کے قہر سے بھارت کے امیر ترین افراد بھی نہ بچ سکے،مکیش امبانی سمیت دیگر افراد کھربوں روپے سے محروم ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق کرونا وائرس جہاں پوری دنیا کو اپنے خوف کے حصار میں لیے ہوئے ہیں وہیں بھارتی امیر زادے بھی اس کے شکار ہونے سے نہ بچ سکے، کرونا وائرس کے باعث بھارت کے امیر ترین شخص مکیش امبانی کو 1.8 بلین ڈالر سے ہاتھ دھونا پڑے۔

کرونا وائرس کے خوف کے اثرات مکیشن امبانی کی کمپنی ریلائنس اینڈسٹریز لمیٹڈ پر واضح نظر آئے، کمپنی کے شیئرز میں 91.6 فیصد کمی ریکارڈ کی گئی۔

بھارت کے دوسرے امیر ترین شخص رادھا کشن دامانی بھی مالی خسارے سے نہ بچ سکے، انہیں بھی 828 ملین ڈالر نقصان کا سامنا کرنا پڑا۔ رادھا کشن دامانی کی کمپنی ایونیو سپر مارٹس کے شیئرز کی قیمت میں بھی نمایاں کمی دیکھی گئی۔

کرونا وائرس کی جاری لہر کے اثرات بھارتی صنعت کار اور ایچ سی ایل کے بانی شیو نادر کی کمپنی پر واضح نظر آئے۔شیو نادر کو 1.1 بلین ڈالر کے نقصان کا سامنا کرنا پڑا جس کے بعد ان کی دولت گھٹ کر 13.1 ارب ڈالر رہ گئی۔

بھارت کے امیر ترین افراد میں شمار کیے جانے والے گوتم اڈانی بھی کرونا وائرس کے قہر سے محفوظ نہ رہے۔ اسٹاک مارکیٹ میں ان کی کمپنی لکشمی متل کے شیئرز میں نہ صرف کمی ریکارڈ کی گئی بلکہ انہیں بھی 1.5 بلین ڈالر کا خسارہ برداشت کرنا پڑا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں