The news is by your side.

Advertisement

کرونا وائرس سے بچاؤ کے لیے طبی سامان بنانے والی فیکٹری کا ویئر ہاؤس سیل

کراچی: شہر قائد میں کرونا وائرس سے بچاؤ کے لیے میڈیکل ڈیوائس بنانے والی فیکٹری کا ویئر ہائوس سیل کر دیا گیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق کراچی میں میڈیکل ڈیوائس بنانے والی فیکٹری کا ویئر ہاؤس چار روز قبل انتظامیہ کی جانب سے سیل کیا گیا، کولاچی انٹرنیشنل نامی کمپنی کے ویئر ہائوس میں ڈاکٹرز کے گاؤن، گلوز، سرجیکل ماسک، این 95 ماسک، سینیٹائزر، شو کور، گوگلز اور دیگر طبی ڈیوائسز بنانے کا مٹیریل موجود ہے۔

ویئر ہاؤس انتظامیہ کا دعویٰ ہے کہ کمپنی کا پورے پاکستان میں چار روز سے کرونا وائرس سے متعلق سامان کی ترسیل بند ہے، کمپنی کو این ڈی ایم اے اور خیبر پختون خوا حکومت کی جانب سے طبی ڈیوائسز کے لیے آرڈر بھی دیے گئے ہیں، کمپنی سے جس طبی سامان کے کوٹیشنز مانگے گئے ان میں این 95 ماسک اور وینٹی لیٹرز بھی شامل ہیں۔

بتایا گیا کہ کمپنی کو 7 دن کے اندر آرڈر مکمل کرنے ہیں لیکن تاحال ویئر ہاؤس بند ہونے کے باعث سامان کی ترسیل نہیں ہو سکتی، کمپنی کے مالک نے سندھ حکومت سے فوری سیل کھلوانے کا مطالبہ کر دیا ہے، انتظامیہ کا کہنا ہے کہ ویئر ہاؤس کو سیل کرنے سے پاکستان میں طبی عملہ مشکلات کا شکار ہے۔

کمپنی کے مالک خواجہ سہیل منصور کا کہنا تھا کہ اگر کمپنی یا ویئر ہاؤس میں کوئی غلط کام ہو رہا ہے تو وہ 50 ارب جرمانہ اور بورڈ آف ڈائریکٹرز کی گرفتاری دینے کے لیے بھی تیار ہیں۔ انھوں نے کہا کہ سندھ حکومت نے موجودہ حالات میں ویئر ہاؤس کو تالا کیوں لگایا اس کی وضاحت کرے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں