The news is by your side.

Advertisement

برطانیہ میں کورونا وائرس کے غلط نتائج نے کھلبلی مچادی

لندن: برطانوی کمپنی ایمیزون میں کورونا وائرس کے غلط نتائج نے کھلبلی مچادی۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق برطانوی کمپنی ایمیزون کے 4 ہزار کے قریب ملازمین کے کورونا ٹیسٹ منفی آئے لیکن کال سینٹر کی غلطی سے تمام ملازمین کو کورونا ٹیسٹ مثبت آنے کے نتائج بتائے گئے۔

کمپنی کی جانب سے سیلف آٗئسولیٹ کی ہدایات کے چند گھنٹوں بعد ہی غلطی کا اعتراف بھی کرلیا گیا۔

واضح رہے کہ برطانیہ میں اس وقت کورونا کی سب سے خطرناک شکل بھی سامنے آئی ہے تاہم برطانیہ کی جانب سے کیے گئے اقدامات کے بعد کورونا کیسز میں کمی آرہی ہے۔

برطانوی حکام کے مطابق پچھلے ہفتے 4 ہزار 345 اموات ہوئیں جو اس سے گزشتہ ہفتے کے مقابلے میں 25 فیصد کم ہیں، برطانیہ میں اب تک ایک کروڑ 55 لاکھ 76 ہزار افراد کو کورونا ویکسین لگائی جاچکی ہے۔

مزید پڑھیں: کورونا کی نئی قسم نے مانچسٹر کو لپیٹ میں لے لیا

گزشتہ دنوں برطانوی ماہرین نے انکشاف کیا تھا کہ برطانیہ میں آنے والی کورونا وائرس کی نئی قسم جان لیوا ہے اور زیادہ خطرناک ہے۔

اس نئی قسم کے نتیجے میں اموات کی شرح میں اضافے کی وجوہات کو مکمل طور پر واضح نہیں کیا گیا، کچھ شواہد سے عندیہ ملتا ہے کہ بی 1.1.7 سے متاثر افراد میں وائرل لوڈ زیادہ ہوتا ہے، جس کے باعث وائرس نہ صرف زیادہ تیزی سے پھیل سکتا ہے بلکہ مخصوص طریقہ علاج کی افادیت کو بھی ممکنہ طور پر متاثر کرسکتا ہے۔

دوسری جانب مانچسٹر کے 2 علاقوں ہارفورے اور موسٹن میں کوروناکی نئی قسم آنے پر شہریوں کو فوری کورونا ‏ٹیسٹ کروانے کی ہدایات جاری کر دی گئی ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں