The news is by your side.

Advertisement

منفرد ریسٹورنٹ: جہاں ویٹرز گونگے بہرے ہیں

ممبئی: بھارت میں انوکھا اور منفرد ریسٹورنٹ ہے جسے قوتِ گویائی سے محروم نوجوان لڑکے اور لڑکیاں چلاتے ہیں اور یہاں کھانے کا آرڈر علامتی زبان میں دینا ہوتا ہے۔

آپ کبھی ایسے ریسٹورنٹ میں گئے جہاں آپ اپنے کھانے کا آرڈر زبان سے بول کر نہیں بلکہ علامتی زبان میں دیں اورویٹر بھی اسے جھٹ پٹ سمجھ کر فوراً  آپ کے آرڈر کی تعمیل کرے۔

جی ہاں! ممبئی میں ’مرچ اینڈ مائم‘ نامی ریسٹورنٹ اپنی نوعیت کا انوکھا ہوٹل ہے جہاں سارا عملہ گونگے بہترے افراد پر مشتمل ہے، مخصوص یونیفارم پہنے خصوصی ویٹرز ہاتھ میں نوٹ بک اور قلم تھامے اشاروں کی زبان میں آرڈر لیتے کر خوش اسلوبی سے اپنی خدمات سرانجام دیتے ہیں۔

ہوٹل کے مالک اسرار کا کہنا ہے کہ ’برطانیہ سے ماسٹرز کی ڈگری حاصل کرنے کے بعد میں نے ریسٹورنٹ میں نوکری شروع کی اور 20 سال کا تجربہ حاصل کیا‘۔

مزید پڑھیں: روبوٹ ہوٹل: بیٹھے بیٹھے آرڈر دیں اور کھانا ٹیبل پر موجود

اُن کا کہنا ہے کہ ’گونگے بہرے افراد کو عام طور پر کوئی نوکری نہیں دیتا اس لیے ریسٹورنٹ کے قیام کا سوچا، ویسے تو قوتِ گویائی سے محروم افراد کو لے کر چلنا اور کام کے دوران مسکراہٹیں بکھیرنا مشکل کام ہے مگر ہم نے اس کے لیے ماہر کی خدمات حاصل کیں جنہوں نے ملازمین کی تربیت کی‘۔

اسرار کا مزید کہنا ہے کہ ’دو سال کی سوچ بیچار کے بعد ہوٹل کھولنے کا فیصلہ کیا، پہلے پہل تو گونگے بہرے افراد کا ملنا مشکل تھا مگر وقت کے ساتھ ساتھ عملہ ملتا رہا اور اب  250 سے زائد افراد یومیہ ہوٹل آکر محظوظ ہوتے ہیں‘۔

ویڈیو دیکھیں


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں