The news is by your side.

Advertisement

کراچی کے پہلے ایڈمنسٹریٹر سیّد ہاشم رضا جو شاعر، ادیب اور دانش ور کی حیثیت سے بھی پہچانے جاتے تھے

سید ہاشم رضا پاکستان کے ممتاز دانش ور اور شاعر تھے۔ وہ پاکستان کے سب سے بڑے شہر کراچی کے پہلے ایڈمنسٹریٹر رہے۔ آج سید ہاشم رضا کی برسی ہے۔

اس ہمہ جہت شخصیت کے مالک اور قابل منتظم نے نہایت فعال اور متحرک زندگی گزاری اور 2003ء میں آج ہی کے دن کراچی میں وفات پائی۔

سید ہاشم رضا 16 فروری 1910ء کو متحدہ ہندوستان کے یو پی کے ایک ضلع میں پیدا ہوئے تھے۔ ان کے والد لکھنؤ میں جج کے عہدے پر فائز تھے۔ 1932 میں انڈین سول سروس کا امتحان پاس کرنے کے بعد سید ہاشم رضا کو 1934 میں احمد نگر بمبئی پریذنڈنسی میں بطور سب ڈویژن افسر تعینات کیا گیا۔

1939 سے 1946 تک وہ صوبہ سندھ میں تعینات رہے۔ قیامِ پاکستان کے بعد انھیں کراچی کا پہلا ایڈمنسٹریٹر مقرر کیا گیا۔ وہ چیف سیکریٹری سندھ، الیکشن کمشنر سندھ، جوائنٹ سیکریٹری وزارت اطلاعات و نشریات، کمشنر بہاولپور، چیف سیکریٹری مشرقی پاکستان اور قائم مقام گورنر مشرقی پاکستان بھی رہے۔

وہ ایک اچھے نثر نگار بھی تھے اور ان کی خودنوشت ہماری منزل کے نام سے شایع ہوچکی ہے۔

حکومت پاکستان نے سید ہاشم رضا کو ستارۂ پاکستان اور ستارۂ قائدِاعظم کے اعزازات سے نوازا تھا۔

وہ کئی قومی اداروں سے منسلک رہے، ترقی اردو بورڈ، قائد اعظم اکیڈمی، قومی سیرت کمیٹی اور ایسے کئی اداروں سے وابستگی ان کی انتظامی صلاحیتوں کا مظہر ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں