The news is by your side.

Advertisement

ایل او سی پر بھارتی جارحیت بڑھ رہی ہے، ڈی جی آئی ایس پی آر

راولپنڈی: ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل بابر افتخار کا کہنا ہے کہ مغربی اور مشرقی سرحد پر فوج مستعد کھڑی ہے، بھارت جس طرح کے اقدامات کررہا ہے اس کو دنیا دیکھ رہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل بابر افتخار نے اے آر وائی نیوز کے پروگرام ’پاور پلے‘ میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ بھارتی فوج لائن آف کنٹرول پر جارحیت کررہی ہے، بھارت کی جنگ بندی خلاف ورزیوں کی تعداد بڑھتی جارہی ہے، قوم کا دفاع ہر صورت کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ ایل او سی پر معصوم شہریوں کو شہید کرنے کے واقعات بڑھ رہے ہیں، بھارتی قیادت کی جانب سے پاکستان پر بے بنیاد الزام لگائے جارہے ہیں، لانچ پیڈ سے متعلق بھارتی بیانات سراسر غلط اور بے بنیاد ہیں، عالمی مبصرین کو دعوت دیتے ہیں آئیں دیکھیں کہاں ہیں لانچ پیڈز، لائن آف کنٹرول پر پوری اجازت دیتے ہیں عالمی مبصرین آئیں اور دورہ کریں۔

بھارت اپنے اندرونی معاملات کو پاکستان سے جوڑ رہا ہے، میجر جنرل بابر افتخار

میجر جنرل بابر افتخار نے کہا کہ بھارت اپنے اندرونی معاملات کو پاکستان سے جوڑ رہا ہے، بھارت کی کوشش ہے کہ اندرونی معاملات سے توجہ ہٹانے کے لیے پاکستان پر الزامات لگائے، بھارت میں اقلیتوں خاص طور پر مسلمان کے جو حالات ہیں اس پر دنیا کو توجہ دینی چاہئے۔

انہوں نے کہا کہ بھارت نے حال ہی میں پاکستان کے خلاف اقلیتوں سے متعلق پروپیگنڈا کیا، کرتارپور اور پاکستان میں اقلیتوں کے ساتھ سلوک پوری دنیا نے سراہا ہے، امریکا نے اپنی رپورٹ ریلیز کی جس میں پاکستان کی تعریف کی گئی۔

ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی ظلم و بربریت سے دنیا بخوبی آگاہ ہے، بھارت جس طرح کے اقدامات کررہا ہے اس کو دنیا دیکھ رہی ہے، بھارت کا وطیرہ ہے جب بھی کسی مسئلے میں پھنسے الزام پاکستان پر لگاتا ہے۔

کرونا وبا کے خلاف جنگ ابھی جاری ہے، ڈی جی آئی ایس پی آر

میجر جنرل بابر افتخار نے کہا کہ کرونا وبا کے خلاف جنگ ابھی جاری ہے، جب تک ویکسین ایجاد نہیں ہوجاتی یہ جنگ جاری رہے گی، مصروفیات زندگی بدلے گی اور وقت ایسا ہی چلتا رہے گا، جب تک ویکسین ایجاد نہیں ہوجاتی کرونا کے ساتھ ہمیں آگے چلنا ہوگا۔

ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ سماجی فاصلے سے متعلق پاک فوج عملدرآمد کررہی ہے، پاک فوج میں بھی سماجی فاصلے کا خاص خیال رکھا جارہا ہے، فوج میں ڈسلپن اہم ہوتی ہے اس لیے عملدرآمد میں کوئی مسئلہ نہیں، کرونا وائرس کے باوجود پاک فوج کے اقدامات چل رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ سرحدوں پر فوج کی تعیناتی جیسے پہلے تھی ویسے ہی ہے، کرونا کے باوجود مشرقی اور مغربی سرحد پر کام چل رہا ہے، سرحد پر فینسنگ بھی جاری ہے جس پر تیزی سے کام ہورہا ہے، کرونا کے باوجود سرحدوں پر باڑ لگانے کا کام بھی جاری ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں