The news is by your side.

Advertisement

پاکستان میں کورونا پھپھڑوں اور دل کونقصان پہنچارہا ہے، ماہرین

کراچی : ماہرین کا کہنا ہے کہ لوگ یہ نہ سمجھیں کوروناوائرس کاخطرہ ٹل گیا ہے، پاکستان میں کورونا نے پھپھڑوں اور دل کونقصان پہنچایا، اینٹی ملیریاڈرگ ڈاکٹرکی ہدایت کےبغیربالکل بھی استعمال نہ کی جائے۔

تفصیلات کے مطابق اے آر وائی نیوز کے پروگرام الیونتھ آور میں گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹرعبدالباری خان نے کہا کہ پاکستان میں کوروناوائرس کی ابھی پیک نہیں آئی ہے، پاکستان میں کوروناوائرس کے مریضوں کی تعداد بڑھے گی۔

ڈاکٹرعبدالباری کا کہنا تھا کہ لوگ یہ نہ سمجھیں کوروناوائرس کاخطرہ ٹل گیا ہے، ہمارےپاس اس وقت بھی 8کورونا مریض وینٹی لیٹرپر ہیں اور ہمارے پاس کورونا کے زیادہ تر مریض تشویشناک آرہے ہیں۔

انھوں نے کہا کہ ہمیں لائف اسٹائل بدلنا ہوگا، ملنے ملانے کا طریقہ تبدیل کرناہوگا، کورونا وائرس کی وہی علامات ہیں جو دنیا بھرمیں پائی گئیں۔

ڈاکٹرعبدالباری کا کہنا تھا کہ پاکستان میں کورونا نے پھپھڑوں اور دل کونقصان پہنچایا، ہمارےپاس زیادہ کورونامریض پھیپھڑوں اوردل کے آرہےہیں، نوجوانوں میں زیادہ دل کی تکلیف والے مریض آرہے ہیں۔

دوسری جانب ڈاکٹرجاویداکرم نے اے آر وائی نیوز کے پروگرام الیونتھ آور میں گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ کورونا وائرس 2وائرس سے مل کر ایک وائرس بناہے، کورونا متاثرہ شخص تقریباً 7افراد کو وائرس منتقل کرتا ہے۔

ڈاکٹرجاویداکرم کا کہنا تھا کہ سماجی فاصلےرکھنے ہیں ہمیں اپنا طریقہ زندگی تبدیل کرنا ہوگا، پاکستان میں کورونا کے مریض بڑھنے کا خطرہ موجودہے، کورونا وائرس زیادہ دیرتک زندہ رہ سکتاہے ، مختلف جگہوں پرکوروناوائرس مختلف گھنٹے تک زندہ رہ سکتاہے۔

انھوں نے کہا کہ کہ اینٹی ملیریاڈرگ ڈاکٹرکی ہدایت کےبغیربالکل بھی استعمال نہ کی جائے، اینٹی ملیریا ڈرگ کی کورونا سے متعلق تحقیق اور تجربات جاری ہیں، کچھ دن میں اینٹی ملیریاڈرگ کی کورونا سے متعلق تفصیلات دیں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں