farooq پیپلزپارٹی کی ہارس ٹریڈنگ نے سینیٹ الیکشن کوغیرشفاف بنادیا، فاروق ستار
The news is by your side.

Advertisement

پیپلزپارٹی کی ہارس ٹریڈنگ نے سینیٹ الیکشن کوغیرشفاف بنادیا، فاروق ستار

کراچی : ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا ہے کہ پیپلز پارٹی نے ہارس ٹریڈنگ کر کے سینیٹ الیکشن کو غیر شفاف بنادیا، نیلام گھر سجانے کی مذمت کرتا ہوں، منحرف اراکین کےخلاف سخت کارروائی کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق متحدہ قومی موومنٹ کے بیشتر اراکین کی جانب سے سینیٹ الیکشن میں پیپلزپارٹی کے امیدوار کو ووٹ دینے پرمتحدہ قومی موومنٹ کی قیادت کو پریشانی میں مبتلا کردیا۔

فاروق ستار کا کہنا ہے کہ پیپلزپارٹی کی ہارس ٹریڈنگ نے آج کے الیکشن کو غیرشفاف بنادیا، ایم پی ایز کی مجبوری اور بےبسی کا فائدہ اٹھا کر انہیں یرغمال بنایا گیا، آج سینیٹ انتخابات میں جو نیلام گھر سجایا گیا ہے میں اس کی پرزور الفاظ میں مذمت کرتاہوں۔

انہوں نے کہا کہ پیپلزپارٹی جو آج کررہی ہے وہ اپنے لئے خود گڑھا کھود رہے ہیں، الیکشن شفاف نہیں ہوئے، الیکشن کمیشن کو خط لکھوں گا کہ ہارس ٹریڈنگ کا نوٹس لے، یہ منظر آج پاکستان کے میڈیا اوران کے کیمروں نے دیکھا۔

ایک سوال کے جواب میں فاروق ستار کا کہنا تھا کہ ناصرشاہ کے کامران ٹیسوری سے متعلق بیان پر صرف یہ کہوں گا کہ ہارس ٹریڈنگ جس کا مشغلہ ہے وہ ہی ایسی بات کرسکتا ہے۔

فاروق ستار نے پیشکش کی کہ کامران ٹیسوری کی تجوری کے گوشوارے میں پیش کرادوں گا، آصف زرداری کے گوشوارے آپ پیش کرادیں، سمندر کے قطرے کا مقابلہ سمندر سے کرینگے توشرما جائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ سینیٹ الیکشن کے نتائج کچھ بھی آئیں، ہارس ٹریڈنگ ختم ہونی چاہئے، اراکین کی خرید و فروخت کاسلسلہ بند کیا جائے، جن باجیوں نے وفاداری بدلی وہ ہمیں بتاتیں کہ کیا دباؤ اور وجہ تھی کہ جس کی باعث انہیں یہ قدم اٹھانا پڑا۔

انہوں نے کہا کہ منحرف اراکین کے خلاف سخت کارروائی کریں گے، اگر پارٹی میں ڈسپلن نہیں تو ایسی سیاسی جماعت کو عوام میں جانے کا حق نہیں ہے، مہاجر ووٹ بینک بہت سمجھدارہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔ 

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں