The news is by your side.

Advertisement

بیرون ملک پھنسے پاکستانیوں کیلئے وطن واپسی سے متعلق اہم خبر

اسلام آباد : وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی ڈاکٹر معید یوسف کا کہنا ہے تمام ایئرلائنز کو پاکستان آنے کی اجازت دی ہے، 270 پروازیں   40 سے 45ہزار پاکستانیوں کو واپس لائیں گی جبکہ  بیرون ملک جانیوالے مسافروں میں کورونا کی علامات پائی گئیں اسے طیارے میں سوار نہیں کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی ڈاکٹر معید یوسف نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا ہمارےپاس لوگوں کو ٹریک اینڈٹریس کرنے کاپورا نظام ہے، تمام ایئرلائنزکو مسافروں کی سہولت کے مطابق اجازت دے دی ہے۔

معاون خصوصی کا کہنا تھا کہ 270 پروازیں 26سے30جون تک واپس وطن آئیں گی، اس دوران 40 سے45ہزار لوگوں کو پاکستان لایا جائے گا ، تمام ایئرلائنز کو پاکستان آنے کی اجازت دی ہے ، 2 سے ڈھائی ہفتے میں خلیجی ممالک سے تمام مسافر وطن پہنچ جائیں گے۔

ڈاکٹر معید یوسف نے کہا کہ پاکستان میں مقیم افراد پروازوں کے ذریعے بیرون ممالک جاسکیں گے، باہر جانیوالے مسافروں کی بھی ایس اوپیزکےتحت چیکنگ ہوگی، جس میں کورونا کی علامات پائی گئیں اسے طیارے میں سوار نہیں کیا جائے گا۔

ان کا کہنا تھا کہ شکایت ہے10سے15دن میں یہاں سےجانیوالےمسافربڑی تعدادمیں پازیٹوآئے، یہ شکایت درست نہیں کہ جویہاں سےگیاوہ پازیٹو ہو،چندکیسزمیں ایساہوا، یہاں سے جانیوالے مسافر پہلے کوروناٹیسٹ کرائیں، اگربیرون ملک جاکرکوروناپازیٹوآئےتویہ ڈپلومیٹک ایشوبنےگا۔

معاون خصوصی نے مزید کہا کہ 3 سے3ہفتےمیں مزدورطبقےکوواپس لانےمیں کامیاب ہوں گے، بیرون ممالک سے آنیوالے مسافروں کو14دن کیلئے قرنطینہ میں رکھا جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں