The news is by your side.

Advertisement

عراق امریکی فوجی اڈے پر ڈرونز اور راکٹس سے حملہ

بغداد :‌ ایرانی حمایت یافتہ جنگجوؤں نے عراقی دارالحکومت میں قائم امریکی فوجی اڈے پر ڈرونز اور راکٹس سے حملہ کردیا۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کی قدس فورس کے سربراہ جنرل قاسم سلیمانی کی شہادت کے بعد ایرانی حمایت یافتہ مسلح تنظیموں کی جانب سے عراق میں قائم امریکی فوجی اڈوں پر وقتاً فوقتاً حملوں کا سلسلہ جاری ہے۔

حالیہ حملہ دو روز قبل بغداد انٹرنیشنل ایئرپورٹ سے متصل امریکی بیس پر ہوا، جس میں دو ڈرونز اور چار راکٹس فائر کیے گئے، جس کے بعد سائرن کی آوازیں گونجنے لگیں اور جوابی کارروائی کے لیے اتحادی فواج کے ہیلی کاپٹرز نے فضا میں گشت شروع کردیا۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ مبینہ طور پر ابابیل بریگیڈ (ایرانی حمایت یافتہ مسلح تنظیم) نے جن ڈرونز کی مدد سے امریکی فوجی اڈے پر حملہ کیا گیا، ان پر جملہ ‘قائد قاسم سیلمانی کا انتقام’ تحریر تھا۔

عراقی میڈیا کے مطابق ڈرونز کو جوابی کارروائی میں دفاع نظام نے مار گرایا تاہم 4 راکٹس امریکی فوجی اڈے کے احاطے میں گرے جس سے معمولی نقصان ہوا ہے۔

ابابیل بریگیڈ نے دعویٰ کیا کہ امریکی فوجی اڈے پر حالیہ کارروائی امریکی حملے میں شہید قاسم سلیمانی اور شہید ابومہدی المہندس کی دوسری برسی کے موقع پر بطور انتقام کی گئی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں