The news is by your side.

Advertisement

پولیس کے چھاپے بازیاب ہونے والی لڑکی دعا زہرہ ہے یا نہیں ؟ والد کا اہم بیان

کراچی : شہر قائد سے اغوا ہونے والی دعا زہرہ کے والد کا کہنا ہے کہ چھاپے کے دوران پولیس کوایک بچی ملی ہے، تصویر موصول ہونے کے بعد بتا سکوں گا، میری بیٹی ہے یا کوئی اور۔

تفصیلات کے مطابق دعا زہرہ کی بازیابی کے لئے پولیس کی جانب سے سانگھڑ میں چھاپے کے بعد اے آر وائے نیوز سے دعا کے والد نے گفتگو کرتے ہوئے کہا مجھےاینٹی وائلنٹ اینڈکرائم سیل سے فون آیا ہے ، بتایاگیاہےکہ سانگھڑمیں چھاپہ مارکارروائی کی گئی۔

والد نے بتایا کہ چھاپے کے دوران پولیس کوایک بچی ملی ہے، پولیس کاکہنا ہےکہ وہ بظاہردعازہرہ نہیں لگ رہی۔

دعا زہرہ کے والد نے کہا میں نے پولیس کو کہا ہے کہ اس کی تصویربھیجیں ، تصویر موصول ہونے کے بعد بتا سکوں گا، میری بیٹی ہے یا کوئی اور۔

یاد رہے پولیس نے دعا زہرہ کی موجودگی سے متعلق خفیہ اطلاع پر سانگھڑ میں چھاپہ مارا، جس میں ایک اور کم عمر لڑکی کو بازیاب کرایا گیا تھا۔

پولیس کا کہنا تھا کہ لڑکی کس شہر کی اور کون ہے ، اس حوالے سے تفصیلات حاصل کررہے ہیں اور لڑکی کا ابتدائی بیان ریکارڈ کیا جا رہا ہے۔

واضح رہے کراچی کے علاقے الفلاح گولڈن ٹاؤن سے چودہ سال کی لڑکی لاپتہ ہوگئی تھی ، اہلخانہ نے دعویٰ کیا تھا کہ ساتویں کلاس کی دعا نامی طالبہ کو اغوا کیا گیا۔

پولیس کا کہنا تھا گھر سے کچرا پھینکنے نکلی تھی پھرواپس نہیں آئی تاہم مقدمہ درج کرلیا گیا ہے اور واقعے کی مختلف پہلوؤں سے تفتیش جاری ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں