The news is by your side.

Advertisement

فیصل واوڈا نااہلی کیس کا فیصلہ 9 فروری کو سنایا جائے گا

اسلام آباد : الیکشن کمیشن فیصل واوڈا نااہلی کیس کا محفوظ فیصلہ 9فروری کو سنائے گا، کیس الیکشن کمیشن میں 2سال سے زائدعرصہ سے زیرسماعت رہا۔

تفصیلات کے مطابق الیکشن کمیشن پی ٹی آئی کے سینیٹر فیصل واوڈا کی نااہلی سے متعلق کیس کا محفوظ کیا گیا فیصلہ بدھ کو سنائے گا، نااہلی کیس الیکشن کمیشن میں 2سال سے زائدعرصہ سے زیرسماعت رہا۔

اسلام آباد ہائی کورٹ نے الیکشن کمیشن کو فیصل واوڈا کیس کا جلد فیصلہ کرنے کا حکم دیا تھا۔

یاد رہے گذشتہ سال دسمبر میں پی ٹی آئی سینیٹر فیصل واؤڈا کی نااہلی سے متعلق درخواست پر فیصلہ محفوظ کرلیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجہ کی سربراہی میں تین رکنی کمیشن نے سماعت مکمل ہونے کے بعد پی ٹی آئی سینیٹر فیصل واؤڈا کی نااہلی سے متعلق درخواست پر فیصلہ محفوظ کیا تھا۔

سماعت کے بعد الیکشن کمیشن کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے فیصل واؤڈا نے کہا تھا کہ ہم نے تمام ثبوت الیکشن کمیشن میں جمع کرا دیئے ہیں، ہم سے جو سوال کیے گئے ان کے جواب زبانی بھی دیئے اور تحریری جوابات بھی جمع کرائے۔

پی ٹی آئی سینیٹر کا کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن ٹرائل کورٹ ہے یا نہیں، مگر ہم اس پر گئے تھے، فیصلہ الیکشن کمیشن پر ہے کہ وہ کب کرتا ہے؟ الیکشن کمیشن نے انصاف کے تقاضے پورے کیے۔

فیصل واؤڈا نے بتایا تھا کہ الیکشن کمیشن نے میری اپوزیشن سے پوچھا اتنےفورم تھے وہاں کیوں نہیں گئے؟ سوال پر سب گم صم تھے، کسی نےکہا طبیعت خراب تھی تو کسی نےکہا جوتے گھس گئےہیں۔

دوسری جانب پیپلز پارٹی کے رہنما قادر مندوخیل کا کہنا تھا کہ امید ہے فیصل واوڈا نااہل ہوجائیں گے، ان کی سینیٹ کی نشست بھی پی پی کے پاس ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں